تازہ ترینعلاقائی

سنجھورو:سابقہ داما نے سسر ، سالے کو قتل اور ساس اور بیوی کو زخمی کردیا

downloadسنجھورو(راؤ وسیم اختر نامہ نگار) آج علی الصبح سنجھورو وارڈ نمبر 2 میں گھریلو جھگڑے پر زاہد خاصخیلی نے اپنے سابقہ سسر غلام محمد (عرف یتیم) اورسابقہ سالے اقبال کے تیرہ سالہ بیٹے سکندر کو خنجر کے وار کرکے قتل کردیا جبکہ اپنی سابقہ ساس حوا اور اپنی مطلقہ( طلاق یافتہ ) بیوی عائشہ کو خنجر کے وار کر کے شدید زخمی کردیا۔ زخمیوں کو سول اسپتال سانگھڑ منتقل کیا گیا جہاں پر عائشہ کی حالت نازک بتائی جاتی ہے۔دونوں مقتولین کی نعشوں کو سنجھورو پولیس نے تحصیل اسپتال سنجھورو میں پوسٹ مارٹم کرانے کے بعد ورثاء کے حوالے کردیا۔زاہد خاصخیلی شہدادپور کا رہائشی ہے جس سے مسماۃ عائشہ نے دو ماہ قبل فیملی کورٹ سانگھڑکے ذریعے خلاء حاصل کی تھی۔زاہد خاصخیلی کو مسماۃ عائشہ سے ایک دو ماہ کی بیٹی ہے جس سے اس کو ملنے نہیں دیاجارہا تھا۔زاہد کو اس کے والد نے اس کا کردار درست نہ ہونے کی وجہ سے عاق کررکھا ہے جس کا اشتہار اخبارات میں بھی شائع ہوچکا ہے۔ملزم زاہد نے میڈیا کے سامنے اپنے جرم کا اعتراف کرتے ہوئے کہا کہ وہ شہدادپور سے گذشتہ شام خنجر لیکر آیا تھا اور اس نے رات سنجھورو ریلوے لائن کے قریب گذاری۔ ملزم کے مطابق اس کے سسرال والے اس کی بیٹی سے ملنے نہیں دے رہے تھے اور مسلسل چار ماہ سے مختلف جھوٹے کیسوں میں ملوث کر کے پریشان کر رہے تھے جبکہ اس نے برادری معززین کے ذریعے مسائل حل کرنے کی کوشش کی ۔ ناکامی پر اس نے یہ انتہائی اقدام اٹھایا ہے اور اس کو اس اقدام کے لئے کسی نے نہیں اکسایا۔ملزم نے پولیس اسٹیشن میں خود کشی کی کوشش بھی کی۔

یہ بھی پڑھیں  پاکستان سیاحوں کی جنت

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker