تازہ ترینفن فنکار

منور ظریف کی چوالیسویں برسی آج منائی جارہی ہے

ویب ڈیسک(نمائندہ شوبز) شہنشاہ ظرافت کا خطاب پانے والے منور ظریف آج ہم میں نہیں مگر اپنے پرستاروں کے دلوں میں اب بھی زندہ ہیں۔ ان کی چوالیسویں برسی آج منائی جارہی ہے۔ منور ظریف کے کئی کامیڈی رول ایسے تھے جن کا تصور کرکے فلم بین آج بھی بے اختیار ہنسنے لگتے ہیں۔شہنشاہ ظرافت اور کامیڈی کے بے تاج بادشاہ کا خطاب پانے والے منور ظریف پچیس دسمبر انیس سو چالیس کو پیدا ہوئے۔ فلم بنارسی ٹھگ سے شہرت کی بلندیوں پر پہنچنے والے کامیڈی ہیرو منور ظریف کی فنی زندگی کا سفر سولہ برسوں پر محیط رہا۔ منور ظریف اپنے فنی زندگی کے دوران جیرا بلیڈ، ہیر رانجھا، موج میلہ، نوکر ووہٹی دا، منجی کتھے ڈاواں، نمک حرام، بندے دا پتر، دامن اور چنگاری سمیت تین سو سے زائد اردو اور پنجابی فلموں میں اداکاری کے جوہر دکھائے۔ منور ظریف نے انیس سو اکہتر میں فلم عشق دیوانہ کے لیے پہلی بار خصوصی نگار ایوارڈ حاصل کیا۔اپنی کامیڈی کے ذریعے پرستاروں کے دلوں میں راج کرنے والے مذاحیہ اداکار منور ظریف انتیس اپریل انیس سو چھہتر کو خالق حقیقی سے جا ملے، مگر اپنی اداکاری کے باعث اپنے مداحوں کے دلوں میں آج بھی زندہ ہیں۔

یہ بھی پڑھیں  مولانا طارق جمیل کا عمران خان سے ٹیلی فونک رابطہ

یہ بھی پڑھیے :

What is your opinion on this news?

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker