پاکستانتازہ ترین

توشہ خانہ کیس: سابق صدر کے قابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری

اسلام آباد(پاک نیوز)احتساب عدالت نے توشہ خانہ ریفرنس میں سابق صدر آصف علی زرداری کے قابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کردئیے جبکہ نواز شریف کو اشتہاری قرار دینے کی کارروائی بھی شروع کردی ہے۔تفصیلات کے مطابق احتساب عدالت میں آصف علی زرداری،نواز شریف اور یوسف رضا گیلانی کے خلاف توشہ خانہ ریفرنس کی سماعت ہوئی،سماعت کے دوران نیب پراسیکیورٹر سردار مظفر نے نوازشریف کو سمن برطانیہ بھجوانے کی رپورٹ عدالت میں پیش کرتے ہوئے بتایا کہ سابق وزیراعظم برطانیہ میں ہیں اور انہیں دفترخارجہ کےذریعے وارنٹ بھیجے گئے ہیں۔جس پر جج اصغر علی نے کہا کہ نواز شریف کے ناقابل ضمانت وارنٹس پر کوئی عملدرآمد نہیں ہوسکا، نواز شریف دانستہ طور پر عدالتی کارروائی کا حصہ نہیں بن رہے ہیں۔دوران سماعت عدالت نے آصف زرداری کی حاضری سے استثنی کی درخواست مسترد کرتے ہوئے ان کے قابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کئے، جج اصغر علی نے ریمارکس دیئے کہ کرمنل کیس ہے آصف زرداری کو عدالت پیش ہونا پڑے گا۔اس موقع پر آصف زرداری کے وکیل فاروق ایچ نائیک نے کہا کہ کورونا وبا کے دن ہیں، آصف زرداری کی عمر زیادہ ہے، ان کے آنے سے لوگ اکٹھے ہونگے میں یہاں عدالت میں موجود ہوں۔جس پر نیب پراسیکیوٹر سردار مظفر نے کہا یہ انتظامیہ کا کام ہے کہ وہ رش کو کنٹرول کرے،ان کے ساتھ کوئی رعایت نہ کی جائے، یوسف رضا گیلانی کو عدالت نے استثنیٰ دیا تو آج ان کا وکیل بھی پیش نہیں ہوا،یوسف رضا گیلانی کا استثنیٰ بھی ختم کیا جانا چاہیے۔فاروق ایچ نائیک نے موقف اپنایا کہ آصف زرداری کو ہائی کورٹ نے میڈیکل گراؤنڈز پر ضمانت دی تھی، وارنٹ تو تب جاری کیے جائیں جب آصف زرداری پیش نہ ہوں، میں ان کی جانب سے یہاں موجود ہوں، عدالت سے درخواست کرتا ہوں کہ وارنٹ جاری نہ کریں، آصف زرداری سابق صدر پاکستان ہیں وہ کہیں بھاگ نہیں رہے۔جس پر جج اصغر علی نے ریمارکس دیئے کہ میں نے اب آرڈر کر دیا ہے وہ اب واپس نہیں ہو گا،بعد ازاں عدالت نے ریفرنس پر سماعت 17 اگست تک ملتوی کر دی۔

یہ بھی پڑھیے :

What is your opinion on this news?

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker