پاکستانتازہ ترین

فیصل واڈا نااہلی کیس کیخلاف درخواست پر فیصلہ محفوظ

اسلام آباد(پاک نیوز )اسلام آباد ہائیکورٹ نے پی ٹی آئی رہنما فیصل واوڈا کی تاحیات نا اہلی کے خلاف درخواست قابل سماعت ہونے پر فیصلہ محفوط کرلیا۔تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائیکورٹ میں فیصل واوڈا نے اپنی تاحیات نا اہلی کے خلاف درخواست دائر کی ، عدالت نے فیصل واوڈا کے وکیل سے استفسار کیا کہ کیا فیصل واوڈا نے کسی بھی پلیٹ فارم پر امریکی شہریت چھوڑنے کا ثبوت پیش کیا ؟، وکیل فیصل واوڈا کی جانب سے کہا گیا کہ نہیں دیا گیا۔ عدالت نے استفسار کیا کہ حقائق بتائیں،الیکشن کمیشن نے کیاغلطی کی؟ وکیل فیصل واوڈا نے کہا کہ فیصل واوڈانے جان بوجھ کرجھوٹابیان حلفی نہیں دیا،عدالت نے استفسار کیا کہ فیصل واوڈاکے بیان حلفی جمع کرانےکی آخری تاریخ کیاتھی؟وکیل فیصل واوڈا نے بتایا کہ 11 جون 2018 کوبیان حلفی جمع کرایا۔عدالت نے ریمارکس دیے کہ الیکشن کمیشن اس نتیجے پرپہنچاکہ بیان حلفی جھوٹاہے توپھرکیاکرتا؟ سپریم کورٹ قراردے چکی جھوٹے بیان حلفی کے سنگین نتائج ہوں گے، جھوٹے بیان حلفی پرتوہین عدالت کی کارروائی بھی ہوسکتی ہے، الیکشن کمیشن بیان حلفی کی انکوائری کرسکتاہے۔وکیل فیصل واوڈا نے کہا کہ دیکھنایہ ہوگااس کے بعدکیاپراسیس ہے؟، عدالت نے ریمارکس دیے کیاالیکشن کمیشن انکوائری کرکے کیس سپریم کورٹ کوبھجوائے؟ عدالت نے درخواست قابل سماعت ہونے سے متعلق فیصلہ محفوظ کرلیا۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button