پاکستانتازہ ترین

ن لیگ اور ترین گروپ میں مائنس بزدار پر اتفاق ہوگیا

لاہور(پاک نیوز) مسلم لیگ ن  اور ترین گروپ میں  وزیراعلٰی پنجاب عثمان بزدار کو  وزارت اعلٰی کے عہدے سے ہٹانے پر اتفاق ہوگیا۔حمزہ شہباز ماڈل ٹاؤن لاہور میں جہانگیرترین کی رہائش گاہ پہنچے، ان کے ہمراہ ن لیگ کے سلمان رفیق، عطا تاڑر، اویس لغاری اور عمران گورایہ بھی موجود تھے۔جہانگیر ترین کی رہائش گاہ پہنچنے پر ترین گروپ کے رہنما عون چوہدری اور دیگر ارکان نے حمزہ شہباز کا استقبال کیا۔ذرائع کے مطابق ترین گروپ کے اراکین نے مسلم لیگ ن کے وفد سے سیاسی مستقبل پرگفتگو کی۔ترین گروپ کے اراکین کا کہنا تھا کہ وہ ذہنی طور  پر حکومت  سے علیحدگی کے لیے تیار ہیں، ہمیں آئندہ انتخابات میں ٹکٹوں کی یقین دہانی کرائی جائے،  ملاقات کی تفصیل سے جہانگیر ترین کو آگاہ کریں گے، جہانگیر ترین جوفیصلہ کریں گے منظور ہوگا، مائنس بزدار میں  ہم آپ کے ساتھ ہیں، تعاون طویل ہوناچاہیے۔اس موقع پر حمزہ شہباز نےکہا کہ آپ کے جذبات قیادت کے سامنے رکھیں گے، پنجاب سے متعلق سب سے مل کر اور بہتر فیصلے کریں گے، دعا ہے کہ ملک کے لیے اچھا قدم ہو۔ذرائع کا کہنا ہے کہ ملاقات کےدوران حمزہ شہباز اور جہانگیرترین میں ٹیلی فونک رابطہ بھی کرایاگیا، دونوں رہنماؤں نے مائنس بُزدار فارمولے پر اتفاق کیا۔ملاقات کے بعد مشترکہ اعلامیہ جاری کیا گیا جس کے مطابق ملاقات میں سیاسی صورت حال پر باہمی مشاورت کی گئی، ترین گروپ کے اراکین نے پنجاب کے معاملات پر مایوسی کا اظہار کیا اور عثمان بزدار کو وزارت اعلٰی کے عہدے سے ہٹانے پر اتفاق کیا۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button