تازہ ترینعلاقائی

بھائی پھیرو:ہیڈ بلوکی کی سرکاری رہائش گاہوں کو کھنڈرات بنادیا۔

بھائی پھیرو(نامہ نگار)بھائی پھیرو۔ہیڈ بلوکی کی سرکاری رہائش گاہوں کو کھنڈرات بنا کرلاکھوں کاسامان اکھاڑ کراوورسیر اپنے گھر لے گیا۔پنجاب کی معروف ترین سیر گاہ ہیڈ بلوکی اور محکمہ انہار کو عرصہ دراز سے دیمک کی طرح چاٹنے والے کرپشن کنگ سب انجینئر نذیر احمد وٹو نے محکمہ انہار کو اپنی جدی جاگیر بنا لیا۔صرف تین راتوں میں سرکاری تار گھر اور اپنی سابقہ سرکاری کوٹھی کواکھاڑ کر ایک لاکھ اینٹ اور اور لاکھوں روپے کاسینکڑوں من ریلوے لائن کا لوہا جو چھتوں پر ڈالی گئی تھی خرد برد کرکے اپنے ذاتی فارم پر پہنچا دی۔اینٹوں اور ریلوے لائن کی سپلائی کیلئے ٹریکٹر ٹرالی بھی سرکاری استعمال کیا گیا۔یادرہے کہ مذکورہ کنگ کرپشن کی ڑیٹائرمنٹ میں صرف چند ماہ باقی ہیں جس پر کرپشن کنگ کی خرد برد پر خوش ہوکر سیکرٹری اریگیشن پنجاب نے اسے ترقی دے کر SDOبنا دیا ہے۔تفصیلات کے مطابق بھائی پھیرو کی نواحی دریائے راوی کی معروف سیرگاہ اور محکمہ انہار سب ڈویژن بلوکی کا سب انجینئر نذیر احمد وٹو مسلسل 20سال سے ایک ہی سب ڈویژن ہیڈ بلوکی سب ڈویژن میں تعینات ہے اور محکمہ انہار کا کیڑا بن کر محکمہ کو کروڑوں روپے چونا لگا چکا ہے۔گزشتہ تین دنوں میں اس نے سرکاری تار گھر اور اپنی سرکاری کوٹھی سے لاکھوں روپے کی اینٹیں اکھاڑ لیں اور چھتوں پر پڑے وزنی لوہے کے گارڈر اور ریلوے لائن کی لوہے کے گارڈر بھی اکھاڑ کر سرکاری رہائش گاہ کو کھنڈرات بنا دیا۔موصوف نے سرکار کا مال چوری کرنے کیلیے ٹریکٹر ٹرالی بھی سرکاری استعمال کی اور یہ سب گھپلا محکمہ ہیڈ بلوکی پر تعینات اعلی افسران کی آنکھوں کے سامنے ہوتا رہا اور چند صحافیوں نے اس کی شکایت بھی کی مگر افسران کے کانوں پر جوں تک نہ رینگی۔موصوف نے اپنے ہیڈ بلوکی والے دفتر سے بلوکی بستی کے تما م گھروں اور مچھلی فروشوں کی دودرجن سے زائد دکانوں کو اپنے دفتر سے بجلی کنکشن لگوا کر دے رکھے ہیں جس کا بل محکمہ انہار ہر ماہ لاکھوں روپے ادا کرتا ہے مگر سب انجینئر کا ملازم بیلدار محمد حنیف دکانداروں سے ہزاروں روپے ماہانہ وصول کرکے سب انجینئر نذیر وٹوکو پہنچاتا ہے جو اپنی جیب میں ڈال کر محکمہ کو نقصان پہنچا رہا ہے۔یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ موصوف نے مقامی ایکسئین اور ایس ڈی او محکمہ انہار کی ملی بھگت سے اپنی پرانی رہائش گاہ میں کئی سال ڈیری فارم بنا رکھا تھا جہاں اس نے محکمہ کے بیلدار ملازم بطور ملازم رکھے تھے جو کام تو سب انجینئر کی ڈیری فارم میں کرتے تھے مگر ہر ماہ تنخواہ محکمہ انہار سے وصول کرتے تھے۔موصوف سب انجینئر نے کئی ماہ قبل ریسٹ ہاؤس کے قریب بننے والی سرکاری عمارات کو اکھاڑ اکھاڑ کر ان کا کروڑوں روپے کاقیمتی ملبہ،اینٹیں،لوہے کے گارڈر اور دیگر سامان چوری کرکے اپنے گھر لیجانا شروع کر رکھا ہے۔گزشتہ روز یہاں صحافیوں کی ایک ٹیم کے سربراہ رانا انتظار اسلام نے موصوف کو موقع پر سامان چوری کرتے رنگے ہاتھوں پکڑ لیا اور اس کی شکایت ایکسین محکمہ انہار بلوکی شعیب احمد خاں سے کی۔ایکسین نے اس چوری اور دن دیہاڑے ڈاکہ کی انکوائری کرنے کا یقین دلایا مگر صحافیوں کا کہنا ہے کہ کرپشن کنگ نزیر وٹو نے کافی عرصہ سے ہیڈ بلوکی میں لوٹ مار کا بازار گرم رکھا ہے اس لیے اعلی حکام کو اس کا نوٹس لینا چاہیے کیونکہ یہ کرپشن مقامی افسران کی ملی بھگت سے ہو رہی ہے اور محکمہ کو کروڑوں کا نقصان پہنچ چکا ہے

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button
error: Content is Protected!!