تازہ ترینعلاقائی

پھول نگر:دو بچوں کونہرمیں پھینک کرخود بھی نہرمیں چھلانگ لگاکر خود کشی کرنے والی ماں پر مقدمہ درج

bhai pheruپھول نگر (نامہ نگار) دو بچوں کو نہر میں پھینک کر خود بھی نہر میں چھلانگ لگاکر خود کشی کرنے والی ماں پر مقدمہ درج ۔مرنے والے بچے کی لاش پوسٹ مارٹم کے بعد ورثا کے حوالے ۔بچ رہنے والے دو بچے بھی ورثا کو دے دیے گئے ۔ایک بچی کی لاش کی تلاش جاری ۔تفصیلات کے مطابق رکن پورہ چک22 کی رہائشی رانی بی بی زوجہ تاج دین نے غربت سے تنگ آ کر رانی بی بی نے اپنے چار بچے بارہ سالہ عظمیٰ بی بی ، دس سالہ اسد ، آ ٹھ سالہ سعدیہ بی بی اور تین سالہ حیدر کو ساتھ لیا بی ایس لنک کینال کی نہر پر جمبر پل سے تھوڑی دور ویران جگہ پرجا کر رانی بی بی نے اپنی بڑی بیٹی عظمیٰ اور سب سے چھوٹے بیٹے حیدر کو نہر میں پھینک دیا۔بچوں کو نہر میں پھینکتے ہوئے ماں کا ظالمانہ رویہ دیکھ کر دوسرے دو معصوم بچے سعدیہ اور اسدڈر کے مارے بھاگ گئے جبکہ سفاک ماں نے بھی نہر میں چھلانگ لگا دی جسے مچھلیاں پکڑنے والوں نے بچا لیا جبکہ عظمیٰ اور حیدر ڈوب کر ہلاک ہو گئے حیدر کی نعش تلاش کر لی گئی جسے پوسٹ مارٹم کے بعد پولیس نے ورثا کے حوالے کردیاجبکہ ماں رانی کے خلاف اقدام خود کشی اور قتل کے جرم میں تھانہ چھانگا مانگا میں مقدمہ درج کر لیا گیاہے اور اسے جوڈیشیل ریمانڈ پر قصور جیل بھیج دیا گیا۔عظمیٰ کی نعش کی تلاش ابھی جاری ہے ۔زندہ بچ رہنے والے بچے بھی ورثا کے حوالے کردیے گئے۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button