پاکستانتازہ ترین

نئی حج پالیسی، 50 فیصد عازمین سرکاری باقی نجی اسکیم کے تحت جائینگے

khursheed-shahاسلام آباد (بیوروچیف)  وفاقی وزیر مذہبی امور خورشید شاہ کا کہنا ہے کہ حج پالیسی 2013ء کابینہ میں پیش کردی، 50 فیصد سرکاری اور 50 فیصد نجی اسکیم کے تحت عازمین حج بھیجے جائیں گے، پالیسی میں پہلے آئیں پہلے پائیں کا اصول مد نظر رکھا گیا ہے، گروپ لیڈر کیلئے 5 سال کی پابندی نہیں ہوگی، حج کرایوں میں ساڑھے 12 سے 14 ہزار روپے تک اضافہ کیا گیا ہے۔ اسلام آباد میں گفتگو کرتے ہوئے وفاقی وزیر خورشید شاہ کا کہنا ہے کہ حج پالیسی 2013 منظوری کیلئے وفاقی کابینہ میں پیش کردی گئی ہے، اس کے تحت 50 فیصد سرکاری اور باقی نجی اسکیم کے تحت عازمین حج پر بھیجے جائیں گے۔ انہوں نے بتایا کہ حج پالیسی غریب آدمی کو سامنے رکھ کر بنائی گئی، ہمیں اس پالیسی سے بہت سے فائدے ہوئے، ہم حاجیوں کی رہائش کیلئے عمارتیں پہلے لے لیتے ہیں، نئی حج پالیسی میں پہلے آئیں پہلے پائیں کا اصول مد نظر رکھا ہے۔ خورشید شاہ کا کہنا ہے کہ پالیسی کے مطابق 2013ء کے حج میں 5 سال سے پہلے کسی کو دوسرا حج کرنے کی اجازت نہیں ہوگی، گروپ لیڈر کیلئے 5 سال کی پابندی نہیں ہوگی، قربانی کے جانور کیلئے 450 ریال سعودی حکومت کو ادا کرنا ہوں گے۔ وفاقی وزیر نے مزید بتایا کہ سرکاری اسکیم میں 5 فیصد ہارڈ شپ کیسز ہیں، سرکاری اسکیم کے حاجیوں کو ٹرین کی سہولت ہوگی، حج کرایوں میں ساڑھے 12 سے 14 ہزار روپے تک کا اضافہ کیا گیا، پاکستان کے جنوبی علاقوں سے حج کرایہ ساڑھے87 ہزار اور شمالی علاقوں سے ساڑھے97 ہزار روپے ہوگا۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button