پاکستانتازہ ترین

جماعت اسلامی کا وزیراعظم کو خط، فوج کی شکایت درج کرادی

jamaat e islamiلاہور(نامہ نگار)جماعت اسلامی نے وزیراعظم کو خط لکھ کر فوج کی شکایت لگادی، لکھا ہے کہ آئی ایس پی آر نے جماعت اسلامی کو جس انداز میں چارج شیٹ کیا، وہ آئین کے خلاف دکھائی دیتا ہے، فوج سمیت تمام اداروں کو آئینی حدود کا پابند ہوناچاہیے۔ جماعت اسلامی کے خط میں کہا گیا ہے کہ سید منورحسن کے دوبیانات کو بنیاد بناکر ذرائع ابلاغ کے ذریعے مصنوعی اور گمبھیر فضاتیار کی گئی،جماعت سمجھتی ہے کہ فوج سمیت تمام اداروں کو آئینی حدود کا پابند ہوناچاہیے، افواج پاکستان کے ترجمان کا براہ راست ایک جماعت کو مخاطب کرنا مسلمہ دستوری تقاضوں سے ماورا دکھائی دیتاہے، حکیم اللہ محسود کو جس انداز میں ڈرون حملے میں نشانہ بنایاگیا اس کی مذمت ہر طبقے نے کی ہے، یہ حملہ قومی اتفاق رائے پر حملہ تھا اوراس سے امن کوششوں کوقتل کیاگیا، دو انٹرویوزاور چند جملوں کو بنیاد بنا کر جماعت اسلامی کی سیاسی جدوجہد کونظر کرنا قومی ادارے کے شایان شان نہیں،افواج پاکستان کی خدمات پر ہمیں اور پوری قوم کو فخر ہے، جن افسروں اور جوانوں نے جان کا نذارانہ پیش کیا، وہ ہمارا امتیاز اور قومی اثاثہ ہیں البتہ یہ بھی حقیقت ہے کہ سابق حکمرانوں کی امریکہ نواز پالیسیوں کی قوم کوبھاری قیمت اداکرنا پڑی، جماعت نے دہشت گردی کی ہر شکل کی ہمیشہ مذمت کی ہے، جماعت کے 17سے زائد ارکان بھی دہشتگردی کا شکار ہوچکے ہیں، جماعت کو طالبان کا ” سیاسی ونگ“ کہنے والے یاد کریں کہ پیپلز پارٹی کے وزیرداخلہ نے طالبان کو ”اپنا بچہ “ قرار دیاتھا،افغانستان میں طالبان حکومت کو تسلیم کرنے میں حکومت ِ پاکستان بھی پیش پیش تھی۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button