پاکستانتازہ ترین

سینئرترین لیفٹیننٹ جنرل ہارون اسلم نےقبل ازوقت ریٹائرمنٹ لے لی

haroon aslamاسلام آباد(بیوروچیف)  لیفٹننٹ جنرل ہارون اسلم نے قبل از وقت ریٹائرمنٹ لے لی،جنرل ہارون اسلم سپرسیڈ ہونے کے باعث ریٹائر ہوئے ہیں۔ چیف آف جنرل اسٹاف لیفٹیننٹ جنرل ہارون اسلم جنرل اشفاق پرویز کیانی کے بعد پاک فوج کے سینئر ترین جنرل تھے،جنرل راحیل شریف کے چیف آف آرمی سٹاف مقرر ہونے کی وجہ سے سپر سیڈ ہونے کے باعث جنرل ہارون اسلم نے ماضی کی روایات کے عین مطابق قبل از وقت ریٹائرمنٹ لے لی ہے ،لیفٹیننٹ جنرل ہارون اسلم کو 2009 میں سوات کے آپریشن راہ راست کا فاتح بھی کہا جاتا ہے۔انہوں نے 1975 میں پاک فوج کی کشمیر رجمنٹ میں شمولیت اختیار کی، 1981 میں پاک فوج کے اسپیشل سروسسز گروپ میں چلے گئے اور پھر کمانڈر اسپیشل سروسز گروپ بھی مقرر ہوئے۔ 1999 میں بریگیڈئر کے عہدہ پر ترقی پانے کے بعد ڈائریکٹر جنرل ملٹری آپریشنز مقرر ہوئے۔ 2005 میں میجر جنرل کے عہدہ پر ترقی کے بعد انفنٹری کمانڈر مقرر ہوئے اور پھر 2010 میں لیفیٹیننٹ جنرل کے عہدہ پر ترقی پائی۔ میجر جنرل کے طور پر لیفٹیننٹ جنرل ہارون اسلم کا سب سے بڑا کارنامہ آپریشن راہ راست سوات کی کمان ہے جس میں انہیں کامیابی ملی اور وہ لیڈنگ فرام فرنٹ کی مثال بنے، وادی سوات کو طالبان کے قبضہ سے آزاد کرانے اور سیاحوں کے لئے اسے دوبارہ پر امن علاقہ بنانے میں کامیاب ہوئے، انہیں ان کے قریبی حلقوں میں فاتح سوات بھی کہا جاتا ہے۔ اکتوبر 2010 میں لیفٹیننٹ جنرل کے عہدہ پرترقی پانے کے بعد انہیں چیف آف لاجسٹک اسٹاف مقرر کیا گیا جسے پاک فوج میں بہت کم اہمیت کی تعیناتی قرار دیا جاتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں  عبدالحکیم: ہیڈورکس سدھنائی میں پانی کی 71 ہزار کیوسک آمد

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker