تازہ ترینعلاقائی

اہل سنت والجماعت ضلع بہاولنگرکے زیراہتمام منعقد ہونے والی خاتم المعصومین ﷺکانفرنس کی جھلکیاں

بہاول نگر (رانا فیصل رحمن)اہل سنت والجماعت ضلع بہاولنگرکے زیراہتمام منعقد ہونے والی خاتم المعصومین ﷺکانفرنس کی جھلکیاں ۔تمام مسالک کے علماء کرام اور معززین سٹیج پر موجود تھے۔مہمانوں کے لئے کرسیاں جبکہ عوام النا س دریوں پر پوری رات خطاب سنتے رہے۔عوام کی کثرت کے باعث بڑی سکرین لگائی گئی تھیں۔سخت تلاشی کے بعد لوگوں کو جلسہ گاہ میں جانے دیا گیا۔کانفرنس کو لائیو سنوایا گیا تھا،منتظمین کے مطابق 44ممالک میں ہزاروں افراد نے اسے سنا۔مختلف افراد کی جانب سے شرکاء کے لئے خیرمقدمی بینرزلگائے گئے تھے ۔دودن قبل کارکنان اور رضاء کاروں نے جلسہ گاہ کے تمام انتظامات سنھبال لئے تھے ۔ملک محمد اسحاق کے صاحبزادے ملک محمد عثمان جلسہ گاہ پہنچے توہزاروں کارکنان نے کھڑے ہوکر انکا شانداراستقبال کیا۔سرگودھا شہر سے آئے نعت خواں رانا عبدالرؤف خان نے سابق صدر مشرف کو آڑے ہاتھوں لیا۔اور کہا کہ وہ وقت دور نہیں جب اس ملک پر طالبان کی اسلامی حکومت ہوگی ۔شہر کی سماجی ،سیاسی اور صحافتی شخصیات حاجی عبدالرحمن قریشی،انجمن تاجران دلشاد مارکیٹ کے صدر چوہدری شفیق احمد،سابق طالب علم رہنماء سہیل خان،چوہدری طاہر،سنےئر صحافی محمدطارق حفیظ،مولانا اکرام اللہ عارفی،مولانا پیر ناصر الدین خاکوانی،مولانا معین الدین وٹو،مولانا قاسم رحمانی بھی مہمانوں کی نشستوں پر رات گئے موجود رہے۔علماء کرام ،صحافیوں اورمعززین کے لئے الگ مہمان گیلری بنائی گئی تھی۔کراچی سے آئے معروف شاعر مفتی سعید ارشد الحسینی کو لوگوں نے خوب داد دی ۔کانفرنس کے منتظمین کے مطابق شرکاء کی تعداد 15سے 20ہزار تک تھی ۔شرکاء جلسہ گاہ میں وقفے وقفے سے یہ نعرے لگائے جاتے رہے دل دل جان جان ،طالبان طالبان ۔دیوبندی بریلوی ،بھائی بھائی۔امیر المجاہدین ملک محمداسحاق کو رہا کرو ۔مبصرین کا کہنا تھاکہ کانفرنس کے زریعے اہل سنت والجماعت نے اپنی طاقت کا مظاہرہ کیا۔جلسہ گاہ کے باہر مختلف اسٹال لگائے گئے تھے ۔مغرب سے شروع ہونے والی کانفرنس صبح تقریبا 5بجے تک جاری رہی۔دعا روحانی شخصیت مولاناسید طفیل شاہ بخاری نے کروائی۔بعدازاں ضلع بھر اور اطراف سے آنے والے قافلے پرامن اپنے اپنے علاقوں کو لوٹ گئے ۔پولیس نفری پروگرام کے حساب سے نہ ہونے کے برابر تھی۔ خاتم المعصومین ﷺکے عقیدے پر کٹ مریں گے۔اہلسنت والجماعت نے ناموس رسالت کے لئے قوم کو شعور دیا ۔مغرب کی گستاخیوں کے ساتھ ساتھ ملک میں موجود گستاخان صحابہ و اہل بیت کا تعاقب جاری رکھیں گے۔سنی قوم کو متحد ہونا پڑے گا۔متنازعہ کتابیں اور گستاخی پر مبنی مواد چھاپنے والوں کے خلاف کاروائی ہو تو فرقہ واریت کا خاتمہ ممکن ہے۔ان خیالات کا اظہار اہل سنت والجماعت ضلع بہاول نگر کے زیر اہتمام فیصل میرج ہال بہاول نگر میں منعقدہ دوسری عظیم الشان خاتم المعصومین ﷺکانفرنس میں ممتازاہل حدیث عالم دین مولانا عبدالحفیظ فیصل آبادی،بریلوی مسلک کے مولانا پیر سلطان حیدری(سمندری)مولانا ہدایت اللہ ،پروفیسرمیاں عبدالمجیدناظم اعلی جمیعت اہل حدیث ،مولانا ندیم سرور معاویہ،مولانا اعظم طارق،مولانا غلام یسین ،سابق شیعہ ذاکرمولانا علامہ سیدمحسن رضا فاروقی (لاہور)نے خطاب کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہا کہ مصلحت پسندی ہمارا شعار نہیں۔ہمارے اوپر فرقہ واریت کا غلط الزام لگایا جاتا ہے ۔جبکہ آج تک صحابہ یا اہل بیت کے خلاف کسی توہین آمیز کتاب لکھنے والے مصنف کو سزا ملی نہ ہی کتابیں ضبط ہوئیں۔شر انگیز مصنفین کو سزائیں ملتی تو ملک میں انتشار نہ پھیلتا۔انہوں نے کہ اہل سنت کے رہنماء ملک محمد اسحاق کی بلاجوازطویل گرفتاری پر شدید احتجاج کرتے حکومت سے انہیں رہا کرنے کا مطالبہ کیا۔انہوں نے کہا کہ اہل سنت کے تمام مسالک میں کوئی اختلاف نہیں اور کسی بھی اختلاف پھیلانے کی سازش کو متحد ہوکر ناکام بنا دیا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ خاتم المعصومین ﷺکانفرنس اہل سنت وجماعت کے نظریات کی ترجمانی میں معاون ثابت ہوگی۔ پروگرام میں اسیر رہنماء ملک محمد اسحاق کے صاحبزادے ملک محمد عثمان ،مرکزی لیگل ایڈوائزر سید غلام رسول شاہ ،مولانا معین الدین وٹو،مولانا پیر ناصر الدین خان خاکوانی بھی موجود تھے۔

یہ بھی پڑھیں  ’’دھرنا فلم‘‘کمزور ایڈیٹنگ کے باعث ہٹ نہ ہوسکی :بی بی سی

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker