تازہ ترینعلاقائی

بھائی پھیرو:شہر اور قرب و جوارمیں پانی لگے ناقص گوشت کی سر عام فروخت

بھائی پھیرو(نامہ نگار) شہر اور قرب و جوار میں پانی لگے ناقص گوشت کی سر عام فروخت ۔سلاٹر ہاؤس کی بجائے گلی محلوں میں مذ بح خانے بن گئے ۔ذمہ دار حکام اور اداروں نے با اثر قصاب مافیا کے سامنے گھٹنے ٹیک دئیے۔Aگریڈ مرغی کی جگہ Bگریڈ کی مرغی کا گوشت بھی دھڑلے سے فروخت۔ذرائع کے مطابق بھائی پھیرو شہر کے مختلف محلوں ،بازاروں ملتان روڈ اور قرب و جوار کے دیہات میں گوشت کے کام سے منسلک لوگوں نے نہایت د لیری اور دھڑلے سے پانی ملا گوشت فروخت کر نے کا نہ رُکنے والا سلسلہ شروع کر رکھا ہے اورمقررہ نر خوں سے زائد پیسے وصول کر نے کی شکایا ت بھی زبان زد عام ہیں۔جبکہ ستم ظریفی کی بات یہ ہے کہ بائی پاس کے قریب قائم کئے گئے زبح خانے میں جا کر جانور ذبح کر نا اور ویٹر نری ڈاکٹر سے صحت مند گوشت کی تصدیق حاصل کر نے کی روایت ہی یہاں نظر نہیں آتی یہی وجہ ہے کہ بیمار ،لاغراور مضر صحت جانور بھی ذبح کر کے لو گوں کو کھلائے جا رہے ہیں ۔ پورے علاقے میں دو چار قصاب ہی کسی حد تک اپنی ذمہ داریاں پو ری کر رہے ہیں ذرائع نے یہ بھی بتایا کہ بعض قصاب خود ہی گوشت پر مہریں لگا رہے ہیں ۔یہی صورت حال مر غی کا گو شت فروخت کر نے والوں کی ہے جو بغیر کسی چیک اینڈ بیلنس کے کم ریٹ اور وزن والی مرغی بھی Aگریڈ مرغی کے گوشت کے نرخوں پر فروخت کر رہے ہیں۔مقامی سماجی اور فلاحی حلقوں نے اعلیٰ حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ اس نا انصافی اور ظلم سے بے بس اور مظلوم لوگوں کو نجات دلانے کیلئے سخت اقدامات کئے جائیں اور شہریوں کو مقررہ نر خوں پر صحت مند گو شت کی فراہمی یقینی بنائی جائے۔شباب ملی کے راہنماء ملک ریاست ،مقبول احمد کمبوہ نے کہا کہ اگر انتظامیہ نے اس ضمن میں اپنی ذمہ داریاں پو ری نہ کیں تو ہم ڈی سی او آفس کے باہر شدید احتجاج کریں گے۔اس سلسلے میں صورت حال معلو م کر نے کے لئے جب ویٹر نری ڈاکٹر رانا اتفاق شاہین سے فون پر رابطہ کیا گیا تو انھوں نے بتا یا کہ اس کام کے لئے ٹی ایم اے ذمہ دار ہے کہ وہ فل ٹائم ڈیو ٹی ڈاکٹر تعینات کر ے۔وہ تو پارٹ ٹائم خدمات انجام دیتے ہیں آج اُن کی ڈی سی اور قصور سے ملاقات میں وہ انھیں تمام صورت حال سے آگاہ کر یں گے۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button