تازہ ترینعلاقائی

بھائی پھیرو:جمعیت علماء پاکستان قیام پاکستان میں حصہ لینے والےعلماء ومشائخ کاورثہ ہے،مقررین سیمنار

بھائی پھیرو(نامہ نگار) پاکستان کا قیام دو قومی نظریہ کی بنیادپر عمل میںآیا اس کیلئے علماء ومشائخ اہلسنت نے بھرپور کردار ادا کیا۔ آج جب بھارت کو پسندیدہ ملک قرار دیا جا رہا ہے توضرورت ہے کہ دو قومی نظریہ کوفروغ دیاجائے۔ اس کیلئے علماء کو اپنا کردار ادا کر نا ہوگاان خیالا ت کا اظہارعلما ء کرام علامہ غلام حسن نورانی،مشتاق احمد نورانی،قاری ارشاد احمد اور مولانانصراللہ مجددی نے جمعیت علماء پاکستان بھائی پھیرو کے زیراہتمام جمعیت کے یوم تاسیس کے مو قعہ پرسیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔جس کی صدارت چوہدری عباس جاویدصدر جمعیت علماء پاکستان نے کی اس موقعہ پر قاری محمد احمدفریدی،قاری ہدائت سیالوی،قاری مدثر رسول،مولانامحمد یار فریدی،قاری عارف،حیدرنورانی اوردیگر موجود تھے۔مقررین نے کہاکہ جمعیت علماء پاکستان قیام پاکستان میں حصہ لینے والے علماء ومشائخ کاورثہ ہے آج پھراسی جذبہ سے کام کر نے کی ضرورت ہے اس لیے ہمیں مل کر جمعیت کاساتھ دینا چاہیے تاکہ پاکستان کے اساسی مقاصد حاصل کیے جا سکیں۔انہوں نے کہا کہ قیام امن اور دہشت گردی کے خاتمہ کیلئے اولیاء کو ماننے والوں کو اقتدار میں لانا ہوگا۔ نظام مصطفےٰ کے نفاذسے ہی ملک ترقی کی طرف بڑھ سکتا ہے ۔سیمینار میں شام میں حضرت اویس قرنی،عمار بن یاسر کے مزار ات اورمسجد کو شہید،امریکی ادارے کی طرف سے قادیانیوں سے متعلق قوانین ختم کرنے کے مطالبہ کی شدید مذمت کی اور اسے پاکستان کی خود مختاری پر حملہ قراردیاغازی ممتاز قادری کی رہائی کا مطالبہ بھی کیا گیا

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button
error: Content is Protected!!