تازہ ترینعلاقائی

بھائی پھیرو: کروڑوں روپے سے بنی بھگیانہ کلاں کی واٹرسپلائی بیس روز سے بند

بھائی پھیرو(نامہ نگار) کروڑوں روپے سے بنی بھگیانہ کلاں کی واٹرسپلائی بیس روز سے بند۔صاف پانی کیلیے لگائے گئے ٹریٹ منٹ پلانٹ پر قبضہ گروپ نے مویشی باندھ لیے۔ عوام بدبوداراور جراثیم سے بھرپور ناقص پانی پی پی کر بیمار ،عوام سراپا احتجاج، انتظامیہ اورحکمران خاموش تماشائی تماشائی ۔تفصیلات کے مطابق بھائی پھیرو کے سب سے بڑے گاؤں بھگیانہ کلاں کی واٹر سپلائی کی الیکٹرک موٹر کوجلے بیس دن سے زائد ہو چکے ہیں ۔عوام کی بار بار توجہ کے باوجود انتطامیہ نے موٹر ٹھیک نہیں کروائی جس کی وجہ سے گاؤں کے لوگ نلکوں اور کنووں کا بد بودار،ناقص ،اور جراثیم زدہ پانی پینے پر مجبور ہیں۔ناقص پانی وجہ سے سینکڑوں افراد طرح طرح کی بیماریوں پیچس ،خارش ،ہیپا ٹائیٹس ا ور پیٹ کی بیماریوں میں مبتلا ہوکر زندہ درگور بن چکے ہیں ۔گاؤں میں کربلا کا سماں ہے مساجد پانی سے محروم ہو گئیں اور نمازیوں کے وضو کیلیے بھی پانی نہیں۔ گزشتہ روز ایک شخص وفات پا گیا تو اسے غسل مرگ دینے کیلیے گھر والوں کو دور دراز سے پانی لانا پڑا۔ایک طرف عوام پانی نہ ملنے سے بیس روز سے شدید مشکلات کا شکار ہیں تو دوسری طرف بے حس انتظامیہ اور حکمرانوں کو بار بار توجہ دلانے کے باوجود انکے کانوں پر جوں تک نہیں رینگی ۔گاؤں کے معززین رانا شمشاد خاں ،رانا محمد اسلم خاں ایڈووکیٹ ،اور دیگر درجنوں افراد نے نے افسران بالا سے درخواست کی ہے کہ ہمارے مسئلہ کا فوری حل نکالا جائے اور مضر صحت پانی سے نجات دلائی جائے۔لوگوں نے خادم اعلی پنجاب سے اپیل کی ہے کہ وہ گاؤں کے ہزاروں افرادن کی زندگیوں کو بیماریوں سے بچائیں۔

یہ بھی پڑھیں  پاکستان ریلویزسی پیک کی ریڑھ کی ہڈی ہے: شیخ رشید

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker