تازہ ترینعلاقائی

ہرپاکستانی میں وطن سے محبت اورعقیدت کاجذبہ بیدارہوجائے توتمام ترمشکلا ت اورمسائل خودبخودزائل ہو جائیں گے،پروفیسرعبدالماجدحمیدمشرقی

unnamed (1)گو جرا نوالہ ( سردار عرفا ن طا ہرسے ) گو جرا نوالہ کی مقدس اور زرخیز سرزمین میں بڑے بڑے نا مور اور روشن چہرے نمو دار ہو ئے ان اعلیٰ اوصا ف کی حامل اور قدآور شخصیا ت میں سے 2 ما رچ 1963 کو ایک مہتاب نے جنم لیا شب قدر کے لمحات اور رمضان المبارک کی با بر کت ساعتیں تھیں ۔ سرزمین گو جرا نوالہ کا یہ جگمگا تا ستارہ اس علا قے پر اللہ رب العز ت کا ایک احسان عظیم ہے پر ائمری تعلیم گو رنمنٹ ایم سی سکول نمبر 4 سے شروع کی ۔میٹرک کا امتحان گو رنمنٹ عطا ء محمد اسلامیہ ہا ئی سکول نمبر 1 سے پا س کیا ۔ ایف اے بی اے سرٹیفکیٹس گو رنمنٹ ڈگری کالج سے مکمل کیے۔ ایم اے کی تعلیم پنجاب یو نیو رسٹی لا ہو ر (اولڈ کیمپس) سے حاصل کی ۔ پی ایچ ڈی کے لیے بیرون ملک تشریف لے گئے Literature and Moral Excellence کے مو ضو ع پر کلا ور فیلڈ یو نیورسٹی لندن سے ڈاکٹریٹ کی ڈگری حاصل کی ۔ پنجاب یو نیورسٹی لا ہو ر اور بغداد یو نیورسٹی عراق سے گولڈ میڈل حاصل کیا ۔ عالم اسلام میں آسان ترین انگریزی زبان میں قرآن مجید ( The Light of Quraan )کے پہلے مترجم و مفسر ہیں ۔ انگلش زبان میں نعتوں کی پہلی کتاب دی فریگر ینس آف مدینہ تصنیف کرنے کے با عث گینز بک آف ورلڈ ریکا رڈ میں اندراج ہوا ۔ آل پاکستان مقابلہ مضمون نویسی بعنوان پیغمبر انقلا ب میں پہلی پو زیشن حا صل کی ۔ ایم اے انگلش کے دوران مقابلہ مضمو ن نو یسی بعنوان The Solution of Our Problums میں پہلی پو زیشن حاصل کی ۔ ملک شام میں مقام اصحا ب کہف پر درس قرآن کا اعزا ز حا صل ہے ۔ 16 جو لائی 2003 بر وز بدھ 11بجے 3 گھنٹے رو ضہ رسول ﷺ کے اندر جا کر بیٹھنے کی سعادت حاصل ہے ۔ مذہبی تبلیغ و تر ویج کیلیے مختلف حوا لہ سے بے لو ث اور بلا معا وضہ درس بھی دیتے رہتے ہیں ۔ تصوف المشرق تعلیم القرآن کے نا م سے دینی مراکز کا سلسلہ نو ر علم سے معا شرے کو روشن و منو ر کر رہا ہے ۔ FMر یڈیو آواز پر ہر منگل کو سلسلہ وار شام کو انگلش زبان میں درس قرآن سے ہزاروں افراد استفا دہ حاصل کر رہے ہیں ۔نہا یت سادہ لو ح اور شریف النفس انسان ہیں عشق رسول ﷺ کے بعد والدین کا احترام ان کا خاصا ہے ۔ با نی و چیئرمین تحریک کا ر خیر (جس تنظیم کا نصب العین مخلو ق کی خدمت اور خالق کی رضا ہے ) ، سرپر ست چا ہت اوپن سکا ؤ ٹس گروپ پاکستان ، سربراہ مشرق سائنس سٹڈی سرکل پر و فیسر ڈا کٹر عبد الما جد حمید مشرقی نے رو زنامہ نیا بول سے خصوصی نشست کے دوران اظہا ر خیال کرتے ہو ئے کہا کہ تعلیمی شعبہ میں حادثاتی طو ر پر نہیں بلکہ اپنی دلچسپی اور مر ضی سے آیا ہو ں مجھے شروع دن سی یہی ایک شعبہ پسند ہے ہما رے معا شرے میں بہت بڑا المیہ یہ ہے کہ جسے دنیا میں کوئی کام نہیں ہے تو وہ تعلیم کے اس مقدس شعبہ سے وابستہ ہو نے کاخواہش مند ٹھہرتا ہے حادثا تی طو ر پر اس شعبہ میں وارد ہو نے والے افراد نے اسے بے حد نقصان پہنچایا ہے ۔ 9th کلا س میں ایک حدیث مبارکہ پڑھی جس کا مفہوم یہ ہے کہ جن کا نامہ اعمال مو ت کے بعد بھی جا ری و ساری رہتا ہے ۔ وہ ہے نیک اولا د ، اچھے شا گرد اور اپنے ہا تھو ں سے دیا جا نے والا صدقہ 1976 کو یہ دعا دل سے مانگی اور رب ذوالجلا ل نے اس شعبہ کی خد مت کے لیے چن لیا ۔ 26 نومبر 1978 تدریس میں پہلا دن تھا جب محلے کے دو بچے پڑ ھنے کے لیے گھر میں آئے اس وقت میں گو رنمنٹ کالج میں گیا رہویں کا طالب علم تھا ۔ بی اے میں پہلی مرتبہ گورنمنٹ کالج کے پلیٹ فا رم سے تقریری مقابلہ میں نمایا ں پو زیشن حاصل کرنے کے بعد مجلس اقبال کا پہلا صدر بنا ۔ شا عر مشرق سے متا ثر ہو کر اپنے تعلیمی ادارے کا نام مشرق سٹڈی سرکل رکھا ۔ انہو ں نے کہاکہ موجودہ حالا ت میں تعلیم فروخت ہو رہی ہے ۔ معیا ر تعلیم یکساں کہیں بھی دکھائی نہیں دے رہا ہے حکومت نے کئی حصو ں میں تعلیم کو تقسیم کردیا ہے ۔ اپر کلا س ، لو ئر کلا س اور ہا ئی کلا س جس نے بچو ں میں ایک احسا س محرومی و احساس کمتری پیدا کر رکرکھا ہے پنجاب ٹیکسٹ بورڈ کا Slybus بھی مختلف حصوں میں تقسیم کیا جا چکا ہے ۔ انہو ں نے کہا کہ آج ایک نیا دستو ر یہ نکلا ہے کہ طا لب علمو ں کو جو کتابیں مفت دی جا تی ہیں ان کا معیا ر بالکل بھی نہیں ہے ۔ سرکا ری تعلیمی اداروں میں تنخواہیں اور دیگر سہولیا ت بہت زیادہ ہو نے کے باوجود بھی رزلٹ بہت کم ہیں پر ائیو یٹ سکولز کی کامیابی اور اچھے نتائج کا کریڈ ٹ بھی سرکا ری سکولو ں کے سر جا تا ہے کیونکہ ان کی بچو ں کو محنت نہ کرانے کی روش نے پر ائیو یٹ سکولو ں کو ہر طرح سے نمایا ں اور معتبر بنادیا ہے ۔ آج ہر قریہ قریہ ، نگر نگر ، گلی محلو ں میں سکول قائم ہو نے سے فائدہ یہ ہو ا کہ تعلیم عام ہو گئی ہے اور نقصان یہ ہوا کہ برا ئے نام ہو گئی ہے ۔ نصا ب تیا ر کرنے والو ں نے معیا ر تعلیم کو پستی اور تنزلی کی طر ف دھکیل دیا ہے تفرقہ با زی ، اختلا فات اور شر پھیلا نے والے مواد کو نصاب میں ہر گز شامل نہیں ہو نا چا ہیے ہے ۔ آپﷺ نے امت میں نفاق پیدا کرنے والو ں کو سخت نا پسند فرمایا ہے ۔ انہو ں نے کہاکہ کوئی سیا ست دان ہو ، کوئی مذہبی سکالر ہو ، کوئی استا د ہو ، کوئی صحا فی ہو یا کسی بھی مکا تب فکر سے تعلق رکھنے والا شخص امت کو جوڑنے کی کوشش کرے نہ کے توڑنے کی ۔ انہو ں نے کہاکہ ہما رے استا د کی اہمیت و حیثیت اسکے عہدے اور مقام و مرتبہ کے مطابق نہیں کی جا تی ہے جو تعلیم کے فقدا ن اور معیا ر تعلیم میں کمی کا با عث ہے ۔ استا د سے زیادہ معا شرے میں ایک پٹواری ، پولیس اہلکا ر اور سیاست دان کی زیادہ عزت اور قدر ہے ۔ انہو

یہ بھی پڑھیں  ٹیکسلا:عبدالغفارخان فرینڈز سوسائٹی کے زیر اہتمام سابق جنرل سیکرٹری پی او ایف ورکمین ایسوسی ایشن کے اعزاز میں الوداعی تقریب

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker