پاکستانتازہ ترین

تحریک انصاف کے 11 ارکان قومی اسمبلی کا مستعفی ہونے سے انکار،(ن) لیگ سے رابطہ کرلیا

لاہور (ڈیسک نیوز) تحریک انصاف کے باغی ارکان نے مستعفی ہونے سے انکار کر دیا ہے ۔ذرائع کے مطابق پی ٹی آئی اپنے باغی ارکان کا گروپ سامنے آنے سے پہلے اجتماعی طور پر استعفے منظور کرانا چاہتی ہے جبکہ حکومت اٹھارہویں ترمیم کے مطابق فارورڈ بلاک کیئے مطلوبہ تعداد پوری ہونے کے انتظار میں ہے، پی ٹی آئی کے 11 ارکان قومی اسمبلی نے استعفے دینے سے انکار کردیا ہے اور ان کے مسلم لیگ (ن) سے رابطے میں ہیں۔رپورٹ کے مطابق استعفوں کے معاملے پر شاہ محمود قریشی کی قیادت میں 25 نہیں تحریک انصاف 22 ارکان اسمبلی سپیکر کے چیمبر پہنچے تھے جبکہ دیگر نے نہ جانے کے لیے بہانہ کر ڈالا۔ تحریک انصاف میں ایک 13 رکنی باغی دھڑا پیدا ہوگیا ہے جس کی قیادت پشاور سے رکن اسمبلی گلزار خان کررہے تھے ،یہ دھڑا سیاسی منصوبہ بندی کے بغیر ہی سامنے آگیا اور جب انہیں احساس ہوا کہ ان کی تعداد تھوڑی ہے اور اٹھارہویں ترمیم کے تحت پارٹی انہیں سیٹ سے محروم کرسکتی ہے تو اس دھڑے میں شامل گلزار خان، ناصر خٹک اور مسرت زیب نے پارٹی سے علیحدگی اختیار کرلی مگر دیگر دس لوگ پارٹی میں موجود رہے۔ ذرائع کے مطابق اس وقت تحریک انصاف سے علیحدگی اختیار کرنےوالے 3 ارکان کے علاوہ بھی 11 ارکان قومی اسمبلی (ن) لیگ سے رابطے میں ہیں اور ان کا کہنا ہے کہ وہ مستعفی نہیں ہوں گے جبکہ خیبر پختونخوا کے ارکان صوبائی اسمبلی کی ایک قابل ذکر تعداد مولانا فضل الرحمن سے رابطے میں ہے تاہم ان سے ڈیل میں وزیراعظم نواز شریف آڑے آرہے ہیں

یہ بھی پڑھیں  بھائی پھیرو۔جمعیت العلمائے پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل صاحبزادہ اویس نورانی کی پھولنگر آمد

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker