تازہ ترینعلاقائی

نتھے جاگیر:بوائزمڈل سکول کی دیواروں کے ساتھ پانی اورگندگی کے ڈھیر

بھائی پھیرو(نامہ نگار) نتھے جاگیر بوائز مڈل سکول کی دیواروں کے ساتھ گندگی کے ڈھیر،گندے پانی کے جوہڑ میں مکھیوں،مچھروں،اور جراثیموں کی بھرمار۔عوام اور طلبا پیچس،زکام،خارش،اور طرح طرح کی بیماریوں میں مبتلا۔ ڈینگی ،ہیضہ ،اور ٹائی فائڈ پھیلنے کا خطرہ ، نااہل بلدیہ ملازمین کی بدولت گاؤں کے گلیاں محلے گندے پانی اور گندگی کے ڈھیروں میں تبدیل ۔سینکڑوں طلبا اور طالبات کی زندگیاں داؤ پر لگ گئیں۔اعلی حکام سے فوری طور پر پانی کے نکاس کرنے کا مطالبہ۔تفصیلات کے مطابق بھائی پھیرو کے نواحی گاؤں نتھے جاگیر میں قائم بوایز مڈل سکول اور اس سے ملحق آبادی کے بیچوں بیچ گندگی کے ڈھیر اور گندے پانی کا جوہڑنہ صرف بلدیہ ملازمین کی بے حسی کارونا رورہے ہیں بلکہ سکول جانے والی طلبا اور عوام گندگی کے ڈھیروں اور گندے پانی کے جوہڑ سے گزرتے وقت طرح طرح کی بیماریوں میں مبتلا ہو رہے ہیں۔ ایک طالبعلم نوید احمد صحافیوں کو بتلایاکہ گاؤں بھر کے گلی محلوں میں اکثر گندا پانی کھڑا رہتا ہے اور پھر یہ سارا پانی سکول کی دیواروں کے ساتھ بنے جوہڑ میں جمع ہوجاتا ہے۔اس نے بتایا کہ سکول کے درجنوں بچے روزانہ بیمار ہو رہے ہیں اور حاضری کم سے کم ہورہی ہے گاؤں کے سماجی رہنما،تحریک انصاف یوتھ ونگ ضلع قصور کے سینئر وائس پریزیڈنٹ رانا ندیم انور نے جوہڑ دکھاتے بتایا کہ اس جوہڑ میں مکھیوں،مچھروں،اور طرح طرح کی بیماریوں کے جراثیموں نے ڈیرے ڈال رکھے ہیں اور ان مضر صحت حشرات الارض میں روز افزوں اضافہ ہوتا جا رہا ہے۔اس گندے پانی کی بد بو سے سکول اور ارد گرد کی آبادی عذاب میں مبتلا ہے اور نزلہ زکام،خارش،پیچساور بخار میں مبتلا ہو رہے ہیں۔اس پانی میں ڈینگی مچھر اور ٹائی فائڈ کے جراثیموں سے سکول اور دیہی آبادی کے ہزاروں افراد کی زندگیاں داؤ پر لگ چکی ہیں۔رانا ندیم نے اے سی پتوکی ،ٹی ایم اے پتوکی اور ڈی سی اوقصور ،چیف سیکرٹری پنجاب سمیت وزیر اعلی پنجاب سے فوری طور پر کارروائی کرنے کا مطالبہ کرتے اس گندے پانی کے نکاس کا مطالبہ کیا۔

یہ بھی پڑھیں  نہ سمجھوگے تو مِٹ جاؤگے اے ہندوستاں والو

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker