تازہ ترینعلاقائی

پھولنگر:پنجاب کسان موومنٹ نے رینجر سے پنجاب کے لینڈمافیا اورقبضہ مافیا کے خلاف بھی کاروائی کامطالبہ کردیا

بھائی پھیرو(نامہ نگار)پنجاب کسان موومنٹ نے رینجر سے پنجاب کے لینڈمافیا اورقبضہ مافیا کے خلاف بھی رینجر کاروائی کرنے کا مطالبہ کر دیا۔ضلع قصور کی ہزاروں ایکڑ سرکاری اور غیر سرکاری زمین پر ناجائز قبضہ کے ثبوت اعلی حکام تک پہنچائے جائیں گے ۔پولیس نے قبضہ گروپوں کے خلاف کاروائی نہ کی تو ڈی پی او آفس قصورکے باہر احتجاجی مظاہرہ کیا جائے گا۔پنجاب کسان موومنٹ ۔پنجاب کسان موومنٹ کے صدر میجر ر حبیب الرحمان میوسے ایس پی قبضہ گروپ کے ستائے سابق ناظم محمد شفیق نے وفد کے ہمراہ ملاقات کی ۔ ملاقات کے بعد صدر حبیب الرحمان میو نے اپنے دفتر سے جاری پریس ریلیز میں کہا کہ پنجاب میں بھی لینڈ مافیا نے کھربوں روپے کی لاکھوں ایکڑ سرکاری اور غیر سرکاری اراضی پر قبضے کر رکھے ہیں ۔ہیڈ بلوکی کے پانڈ ایریا کی ہزاروں ایکڑ اراضی پر پنجاب کے سب سے بڑے قبضہ گروپ نے قبضہ جما رکھا ہے ،مقامی انتظامیہ اورپولیس کی سرپرستی میں کام کرنے والے : پنجاب کے سب سے بڑا قبضہ گروپ دن دیہاڑے غریب لوگوں کی زمینوں پر قبضے کر لیتا ہے۔کئی خاندان کنگال ہو کر فاقوں کا شکار ہو چکے ہیں اور کئی متاثرہ لوگ ایڑیاں رگڑ رگڑ کر مر چکے ہیں۔اس گروپ نے اربوں روپے کی سرکاری محکموں کی زمینیں بھی ہڑپ کر رکھی ہیں۔با اثر قبضہ گروپ کے رانا فیاض احمد خاں نے تیس غنڈوں کے ہمراہ گزشتہ دنوں دن دیہاڑے آتشین اسلحہ سے مسلح ہوکر سابق ناظم محمد شفیق کی دس ایکڑ زمین پر ناجائز قبضہ کیا ،دہشت پھیلائی مگر دو ماہ گزر جانے کے باوجود پولیس نے اس قبضہ گروپ کے خلاف کوئی کاروائی نہیں کی۔میجر حبیب الرحمان میو نے وفد کو یقین دلایا کہ وہ مظلوم خاندان کی مدد کریں گے اور پنجاب میں قبضہ گروپوں کے دستاویزی ثبوت چیف آف آرمی سٹاف اور چیف جسٹس پاکستان کو پہنچائیں گے انہوں نے وزیر اعظم پاکستان سے مطالبہ کیا کہ وہ ہیڈ بلوکی کی محکمہ انہار اور محکمہ اوقاف کی اربوں کی زمینوں پر ناجائز قبضوں کی تحقیقات کرائیں،کراچی کی طرح پنجاب میں بھی رینجر اور فوج سے کاروائی کرواکر کھربوں روپے کی سرکاری زمینوں کو واگزار کرائیں اور یہ کیس نیب کو دیں۔کسان موومنٹ کے رہنما نے ضلعی پولیس سے مطالبہ کیا کہ وہ قبضہ گروپوں کے خلاف فوری کاروائی کرے وگرنہ مظلوم کسانوں کے ہمراہ ڈی پی او آفس کے باہر احتجاجی مظاہرہ کیا جائے گا۔

یہ بھی پڑھیں  آزادی کا سفر۔۔۔۔۔غلامی تک

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker