پاکستانتازہ ترین

ووٹ اصلی تھا یا جعلی، الیکشن کمیشن کا تصدیق کرانے کا فیصلہ

election officeاسلام آباد(بیوروچیف)  الیکشن کمیشن نے جعلی ووٹوں کی شکایات والے حلقوں میں بیلٹ پیپر پر لئے گئے ووٹروں کے انگوٹھوں کے نشان کی نادرا سے تصدیق کرانے کا فیصلہ کیا ہے۔ اخراجات دھاندلی کا الزام لگانے والے امیدوار برداشت کریں گے۔دھاندلی کے الزامات اور شکایات اور مطالبات کے بعد الیکشن کمیشن نے نادرا سے کہہ دیا ہے کہ ووٹرز کے انگوٹھوں کی تصدیق کیلئے انتظامات مکمل کئے جائیں، نادرا انگوٹھوں کے نشانات کی تصدیق کے نظام کو مزید موٴثر بنانے کیلئے سافت ویئر تیار کرے گا۔ چیئرمین نادرا کے مطابق یہ کام کافی وقت طلب ہے، ایک انگوٹھے کے نشان کی تصدیق کیلئے 10 سے 15 روپے تک کے اخراجات آئیں گے، یومیہ 5 لاکھ ووٹرز کی تصدیق ہو سکے گی۔دھاندلی کی شکایات کیلئے الیکشن کمیشن ملک بھر میں 14 الیکشن ٹریبونلز قائم کرچکا ہے، انگوٹھوں کے نشانات کی تصدیق صرف اسی حلقے میں کرائی جائے گی جہاں الیکشن ٹریبونلز کہیں گے، نادرا ان حلقوں میں انگوٹھوں کے نشانات کی تصدیق کرکے صوبائی الیکشن کمیشن کو جمع کرائے گا۔ دھاندلی کی شکایات تو ہر جانب سے سامنے آرہی ہیں، کس کے الزامات کس حد تک درست ہیں انگوٹھوں کے نشانات کی تصدیق سے یہ فیصلہ کرنے میں مدد ملے گی، تاہم اس پر آنے والے اخراجات الزام لگانے والے امیدوار ہی برداشت کریں گے۔

یہ بھی پڑھیں  آئی ایم ایف نے پاکستان کو قرضے کی پہلی قسط ادا کردی

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker