پاکستانتازہ ترین

الطاف حسین پر غداری کا مقدمہ چلایا جائے، جاوید ہاشمی

ملتان(نمائندہ خصوصی)سنیئر سیاستدان جاوید ہاشمی نے کہا ہے کہ ایم کیو ایم کے قائد الطاف حسین کا رویہ شدت پسند ہے یہاں ہمارے جوان شہید ہو رہے ہیں اور وہ کہتے ہیں کہ وہ بھارت کے بیٹے ہیں۔الطاف حسین کے خلاف غداری کا مقدمہ چلنا چاہیے اور سزا کے لئے حکومت ، برطانیہ سے طے کر کہ انہیں وطن واپس لائے ۔ رہائشگاہ پر پریس کانفرنس میں ان کا کہناتھا کہ الطاف حسین بھارت کو مدد کے لئے بلا رہے ہیں، وہ بھول گئے ہیں کہ انہیں وہاں سے دھکے مار کر نکالا گیا، ایم کیو ایم کے متوسط طبقہ کی جماعت ہونے پر میرے دل میں نرم گوشہ رہا ۔ انہوں نے کہا کہ سپریم کورٹ نے آج جو فیصلہ دیا ہے اگرچہ وہ اختلافی ہے لیکن بہت اچھا فیصلہ ہے۔ اس فیصلہ سے ایک ادارہ کا دوسرے ادارے میں راستہ بند ہو گا اور یہ فیصلہ کسی دباؤ کے تحت نہیں آیا، ہمارے ملک میں اداروں کی ہمیشہ توہین ہوئی ہے ۔ جاوید ہاشمی نے کہا کہ فوجی عدالتوں اور عسکری قیادت نے بھی آئین کا راستہ اختیار کیا ہے اور سپریم کورٹ نے بھی آج اس پر مہر لگا دی ۔ انہوں نے کہا کہ اسمبلی چاہیے تو عمران خان کی رکنیت ختم کر سکتی ہے جب عمران خان نے استعفی پر دستخط تب میں نے کہا تھا کہ ہم کس منہ سے واپس جائیں گے لیکن عمران خان اسی منہ کے ساتھ گئے ۔ آئین نے بھی انہیں اسمبلی میں آنے کا قانونی جواز دیا اور اسمبلی کے معاملات میں بھی حصہ لینے دیں ۔ جاوید ہاشمی نے کہا کہ میں نے اسمبلی اور عمران خان کی سیاست کو بچایا ، تحریک انصاف کا محسن ہوں ۔ انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کو جسٹس وجیہہ الدین کی اہمیت کا اندازہ نہیں ان کی بات نہ مان کر تحریک انصاف میں بحران کی کیفیت پیدا ہو سکتی ہے ۔ جاوید ہاشمی نے کہا کہ کلثوم نواز میرے سے رابطہ کریں گی تو میں بھی ان سے بات کروں گا وہ میری بہن ہے ایک بار پہلے بھی انہیں خالی ہاتھ بھیجا جس کا افسوس ہے

یہ بھی پڑھیں  تحریک قصاص حکومتی خاتمے تک جاری رہیگی،طاہرالقادری

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker