تازہ ترینعلاقائی

ٹیکسلا:جلالہ روڈ ڈھوک درزیاں میں قبرستان کی اراضی پر غیر قانونی پلاٹنگ ، متعدد قبریں مسمار

ٹیکسلا( ڈاکٹر سید صابر علی /نا مہ نگار)جلالہ روڈ ڈھوک درزیاں میں قبرستان کی اراضی پر غیر قانونی پلاٹنگ ، متعدد قبریں مسمار کردی گئیں اہل علاقہ میں غم و غصہ کی لہر دوڑ گئی،متاثرہ افراد نے قانونی کاروائی کے لئے اسسٹنٹ کمشنر ٹیکسلا اور ڈی ایس پی ٹیکسلا سرکل کو تحریری درخواستیں دے دیں،تفصیلات کے مطابق سہیل اختر ولد محمد نذیر ساکن ملک آباد نے درخواست گزاری ہے جس میں موقف اختیار کیا گیا کہ سائل کے والد کے نانا اپنے ذاتی رقبہ موضع جلالہ ٹیکسلا سے رقبہ تعدادی ساڑھے بارہ کنال قبرستان کے لئے وقف کی تھی،لیکن ملکیت ابھی تک مالکان کے نام ہے،مذکورہ شخص نے موقف اختیار کیا کہ کچھ عرصہ قبل نور نبی نواز ولدمحمد نوازساکن لوسر شرفونے قبرستان میں ایکسی ویٹر مشین لگا کر پچیس سے تیس قبریں کھود ڈالی ہیں،اور ان پر پلاٹ بنا رہا ہے،اہل علاقہ کے منع کرنے پر انھیں سنگین نتائج کی دھمکیاں دیتا ہے،مذکورہ شخص نے ہوائی نمبروں کی بنیاد پرمحض حوس و لالچ میں آکر لوگوں کے جذبات سے کھیل رہا ہے،اور قبرستان کو مسمار کر کیاس پر قبضہ اور پلاٹوں کی فروخت کا سلسلہ شروع کرنا چاہتا ہے جو کہ غیر قانونی فعل ہے،قبل ازیں یہ شخص پچیس تیس قبروں کی بے حرمتی کرچکا ہے ، سہیل اختر نے اسسٹنٹ کمشنر ٹیکسلا اور ڈی ایس پی ٹیکسلا سرکل کو درخواست دی ہے کہ مذکورہ شخص کو غیر قانونی فعل سے روکا جائے اور قانون کے مطابق کاروائی عمل میں لائی جائے ادہر واقعہ کے بعد اہل علاقہ نے بھی اپنا احتجاج رکارڈ کرایا،مکینوں کا مطالبہ ہے کہ ان کے پیاروں کی قبریں مسمار کی جارہی ہیں اور کوئی انھیں روکنے والا نہیں،اگر اس پر فوری نوٹس نہ لیا گیا تو وہ انتہائی احتجاج پر مجبور ہونگے ، بتایا جاتا ہے کہ جس جگہ پلاٹنگ کی جارہی ہے ان میں خسرات نمبر379,380,381,382 شامل ہیں جو مساوی مربعہ بندی کے تحت قبرستان میں شامل ہیں ،اہل علاقہ کی جانب سے ڈی سی او راولپنڈی ، وزیر اعلیٰ پنجاب سے مطالبہ کیا گیا ہے کہ اس بابت اعلیٰ سطح پر تحقیقات کی جائیں اور محکمہ مال کے افرد جو اس ملی بھگت میں ملوث پائیں جائیں انکے خلاف بھی سخت کاروائی کی جائے،

یہ بھی پڑھیں  اوکاڑہ: این اے 147سے معین وٹو کامیاب قرار

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker