پاکستانتازہ ترین

ایم کیو ایم کے استعفوں کی اندرونی کہانی

لاہور(نمائندہ خصوصی)ایم کیو ایم کو استعفوں کی ضرورت کیوں پیش آئی؟ اب تک نیوز نے اندر کی بات کھوج نکالی۔ استعفوں کا فیصلہ ایم کیو ایم کے قائد الطاف حسین نے ممکنہ فارورڈ بلاک کا راستہ روکنے کے لیے کیا۔ نہ رہے گا بانس نہ بجے گی بانسری، ایم کیو ایم کے قائد الطاف حسین نے بھی کچھ ایسے ہی مقولے پر عمل کرتے ہوئے سینیٹ، قومی اور سندھ اسمبلی سے استعفوں کا انتہائی فیصلہ کر ڈالا۔ واقفانِ حال کہتے ہیں کہ یہ اہم فیصلہ ایم کیو ایم میں ممکنہ فارورڈ بلاک کی تشکیل سے متعلق اطلاعات پر تادیبی حربے کے طور پر کیا گیا۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ ایم کیو ایم کی دو اہم ترین شخصیات ان دونوں فارورڈ بلاک بنانے کے لیے متحرک ہیں جنہوں نے اسلام آباد میں سولہ ہم خیال رہنماؤں سے کامیاب ملاقاتیں کیں۔ ممکنہ فارورڈ بلاک کے ارکان پارٹی میں سیاست اور مجرمانہ عناصر کو الگ رکھنے کے حامی ہیں تاکہ عوام میں کھویا ہوا تشخص بحال کیا جاسکے اور ملکی اور عالمی سطح پر بھی پارٹی کا امیج مجروح ہونے سے بچایا جاسکے۔الطاف حسین نے اپنے بیان میں بھی اس خدشے کا برملا اظہا کیا تھا کہ اسلام آباد میں ایک نئی ایم کیو ایم بنائی جارہی ہے۔ فیصلے کا مقصد پارٹی میں باغیانہ ذہن رکھنے والے ارکان اسمبلی سے جان چھڑانا اور ضمنی انتخابات کی صورت میں مخلص اور سرفروش رہنماؤں کو آگے لانا ہے۔

یہ بھی پڑھیں  پتوکی:18500 لا پتہ افر اد کی با زیابی کے لئے پید ل قافلہ بلوچستان سے پتوکی پہنچ گیا

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker