پاکستانتازہ ترین

ضمنی انتخاب میں الیکشن کمیشن کا جاری کردہ ضابطہ اخلاق بحال

اسلام آباد(پاک نیوز) سپریم کورٹ نے لاہور ہائیکورٹ کا فیصلہ معطل کرتے ہوئے الیکشن کمیشن کا ضابطہ اخلاق بحال کردیا۔  ضابطہ اخلاق کی معطلی کے فیصلے کے خلاف الیکشن کمیشن نے سپریم کورٹ میں درخواست دائر کی تھی جس کی سماعت جسٹس ثاقب نثار کی سربراہی میں 3 رکنی بینچ نےکی۔ الیکشن کمیشن کے وکیل ابراہیم ستی نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ ضابطہ اخلاق آرٹیکل 218 اور سپریم کورٹ کے فیصلے کی روشنی میں تیار کیا گیا تھا۔ وزرا اور ارکان اسمبلی کے دوروں اور ترقیاتی کاموں کے اعلان سے انتخابی عمل متاثر ہوتا ہے۔ ضابطہ اخلاق بنانے کا مقصد شفاف انتخابات کو یقینی بنانا ہے۔ عدالت نے لاہور ہائیکورٹ کا فیصلہ معطل کرتے ہوئے سماعت غیر معینہ مدت کیلئے ملتوی کر دی۔عدالتی فیصلے کے بعد وزرا اور ارکان اسمبلی ضمنی انتخاب والے حلقوں کا دورہ نہیں کر سکیں گے

یہ بھی پڑھیں  بھارت پاکستان کی امن کی خواہش کو کمزوری نہ سمجھے، چوہدری نثار علی

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker