تازہ ترینعلاقائی

داودخیل:ہمیں قرآن وسنت پر عمل پیرا ہوکر دین کی خدمت کرنی چاہیئے،خیر محمدبھوروی

داؤدؒ خیل( ضیانیازی سے ) ہمیں قرآن وسنت پر عمل پیرا ہوکر دین کی خدمت کرنی چاہیئے اور دین کی تعلیم دینے والے مدرسے تو آج کے دور میں نہایت اہمیت کے حامل ہیں کیونکہ آج جتنی ضرورت دینی تعلیم کی ہے اتنی ہی شاید کوئی اور نہ ہو حافظ قرآن کی اللہ تعالی اور اسکے پیارے رسول نبی کریم ﷺ نے جو فضیلت بیان کی ہے اس کا اگر ہر مسلمان کو پتہ ہو تو وہ اپنے بچوں کو پہلے حافظ قرآن کی تعلیم سے زیورآراستہ کرتے ان خیالات کا اظہار سجادہ نشین آستانہ عالیہ بھور شریف صاحبزادہ پیر طریقت رہبر شریعت خیر محمد بھوروی نے مدرسہ انوارالقرآن غوثیہ رمدیہ لاری اڈہ داؤدخیل میں وہاں سے حفظ کرنے والے طالبعلم حافظ مجیب الرحمان خان ولد حاجی عبدالمنان خان کی دستار بندی کی منعقدہ تقریب سے اپنے خطاب میں کیا انھوں نے کہا کہ اللہ تعالیٰ نے عالم ،مجاہد،شہید اور سخی کے اپنے اپنے درجات فرمائے ہیں مگر جو درجہ حافظ قرآن کو دیا گیا ہے وہ عظمت والا درجہ ہے کیونکہ حافظ قرآن اپنے سینے میں پورے قرآن کا حفظ کرکے اس دنیا میں راہ نجات کا ذریعہ بنتا ہے اور اپنے والدین اور عزیزواقارب کی بخشش کا بھی ذریعہ بنتا ہے انھوں نے کہا کہ اس سے پہلے دور میں خانگاہیں ہوا کرتی تھیں اور طالبعلم وسائل نہ ہونے کے باوجود بھی قرآن کا درس لیا کرتے تھے جامعہ اکبریہ کے سربراہ حضرت علامہ صاحبزادہ عبد المالک نے کہا کہ اس وقت اصل تعلیم قران و سنت کی ہے ہم لوگ اس تعلیم سے دور ہوتے جا رہے ہیں اور مغربی ممالک کے رسم و رواج پر عمل پیرا ہو کر گمراہ ہو رہے ہیں اگر ہم قران و سنت اور آقا د وجہاں محمد ﷺ کی بتائے ہوئے طریقوں پر چلیں تو کوئی وجہ نہیں کہ ہم لوگ ترقی نہ کریں ہم مسلمانوں نے اسلامی طریقوں سے دوری کر کے پسماندگی کی طرف جا رہے ہیں جب کہ غیر مسلم ممالک اسلامی طریقوں پر عمل کر کے آج ترقی یافتہ ممالک میں شامل ہو رہے ہیں اس کے علاوہ تقریب سے مفتی ضیاء الرحمن ،حافظ مسعود الحسن ، ودیگر علماء کرام نے بھی خطا ب کیا آخر پر شرکا ء محفل میں لنگر تقسیم کیا گیا

یہ بھی پڑھیں  بے خوف قیادت ہی کراچی کو بھتہ خوری و قتل سے نجات دلاسکتی ہے،سمیعہ قاضی

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker