شہ سرخیاں
بنیادی صفحہ / پاکستان / مریم نواز،بلاول بھٹو ملاقات: حکومت مخالف تحریک چلانے پرغور

مریم نواز،بلاول بھٹو ملاقات: حکومت مخالف تحریک چلانے پرغور

لاہور(پاک نیوز)پیپلز پارٹی کے چیئرمین اور مسلم لیگ نواز کی نائب صدر مریم نواز کے درمیان ہونے والی ملاقات میں طے پایا کہ حکومت کے خلاف احتجاجی تحریک چلانے کے لئے اپوزیشن جلد ایک مشترکہ لائحہ عمل مرتب کرے۔ شہباز شریف، شاہد خاقان عباسی سمیت نواز لیگ کے کسی اہم عہدیدار نے اجلاس میں شرکت نہ کی۔رائیونڈ فارم ہاؤس میں مریم نواز کی طرف سے دیئے جانے میں ظہرانے میں شرکت کے بعد بلاول بھٹو زرداری نے اپنی میزبان سے ایک گھنٹہ سے زائد ون ٹو ون ملاقات کی۔ملاقات میں نیب کی طرف سے اپوزیشن رہنماؤں پر بنائے جانے والے مقدمات، حالیہ بجٹ، مہنگائی، بے روزگاری اور حکومت مخالف احتجاجی تحریک چلانے کےلئےآل پارٹی کانفرنس جلدبلانےسے متعلق معاملات پر غور کیا گیا۔ملاقات میں اس امر پر اتفاق کیا گیا کہ اعلی عدلیہ کے جج صاحبان کے خلاف ریفرنس واپس لیا جائے۔ گرفتار اراکین قومی اسمبلی کےپروڈکشن آرڈرجاری کئے جائیں۔جبکہ احتجاجی تحریک کے حوالے سے حکومتی اتحاد میں شامل جماعتوں کو بھی اعتماد میں لیا جائے۔دونوں رہنماؤں نے فیصلہ کیا کہ حکومتی پالیسیوں کے خلاف پارلیمنٹ کے اندر اور باہر احتجاجی تحریک جلد شروع کی جائے گی۔مریم نواز کی طرف سے دیے جانے والے ظہرانے میں پیپلز پارٹی کے رہنماء قمر زمان کائرہ، چوہدری منظور، حسن مرتضی، رانا ثناء اللہ ، مریم اورنگزیب، سینٹر پرویز رشید اور سابق گورنر سندھ محمد زبیر نے شرکت کی۔

یہ بھی پڑھیں  پولیو کے مکمل خاتمے تک پاکستان کی مدد جاری رکھیں گے، عالمی ادارہ صحت