پاکستانتازہ ترین

وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان مذاکرات کے راستہ میں بہت بڑی رکاوٹ ہیں ،مولانا کفایت اللہ

ڈیرہ غازی خان (جنیدملک )جمعیت علماء اسلام (ف) کے مرکزی رہنما مفتی کفایت اللہ نے کہا ہے کہ وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان مذاکرات کے راستہ میں بہت بڑی رکاوٹ ہیں اور اگر وزارت داخلہ کا قلمدان کسی اور شخص کے پاس ہوتا تو اب تک مذاکرات کامیاب ہو چکے ہوتے ۔وہ ڈیرہ غازی خان میں میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کر رہے تھے انہوں نے کہا کہ لوگ جس طرح کپڑے تبدیل کرتے ہیں عمران خان آئے روز اپنا موقف تبدیل کر دیتے ہیں جبکہ قوم کو اس وقت مستحکم موقف کی ضرورت ہے انہوں نے کہا کہ سرحدوں پر خطرات منڈلا رہے ہیں انڈیا مخالف تھا اب ایران اور افغانستان سمیت نیٹو ممالک بھی ہمارے مخالف ہو گئے ہیں اور دنیا کو ہمارے ایٹمی اثاثے کھٹک رہے ہیں دشمن ہماری فوج کو کمزور کر کے ایٹمی اثاثوں پر قبضہ کرنا چاہتا ہے انہوں نے کہا کہ خارجی خطرات سے نمٹنے کے لئے داخلی انتشار کو ختم کرنا ہو گا دہشت گردی کے نام پر لڑی جانیوالی جنگ دراصل ہم پر مسلط کی گئی اور اس جنگ میں 50ہزار بے گناہ لوگ مارے گئے جبکہ 100ارب ڈالر کا معاشی نقصان اٹھانا پڑا ہے ان کا کہنا تھا کہ حکومت مذاکرات کے لئے سنجیدہ نہیں اور آپریشن کی حمایت کرنے والے ملک کے مخلص نہیں اور وہ ایٹمی اثاثوں کو دشمن کی جھولی میں ڈالنا چاہتے ہیں انہوں نے مزید کہا کہ حکومت مذاکرات کے لئے سنجیدہ نہیں اس لئے ہم کسی غیر سنجیدہ عمل کا حصہ نہیں بنے ۔ مفتی کفایت اللہ نے طالبان کو مشورہ دیتے ہوئے کہا کہ وہ دل بڑا کر کے یکطرفہ جنگ بندی کا اعلان کریں تاکہ حکومت کے پاس کوئی بہانہ باقی نہ رہے ۔

یہ بھی پڑھیں  پریس کلب بھائی پھیرو،اور سرائے مغل کا تعزیتی اجلاس

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker