پاکستانتازہ ترین

کرسی کاچکر،سگے بھائی اورماموں بھانجے ایک دوسرے کے مد مقابل

electionلاہور(نمائندہ خصوصی) اقتدار کا نشہ یا حکومت میں رہنے کا خاندانی شوق الیکشن دوہزار تیرہ میں سگے بھائی ایک دووسرے کے مدمقابل آگئے۔کئی حلقوں میں ماموں بھانجوں سے مقابلے کریں گے۔اقتدار کا نشہ طاقت یا پھر ہر دور میں حکومت میں رہنے کی سیاست۔ الیکشن دوہزار تیرہ میں جہاں مخالف ایک دوسرے کے مدمقابل ہیں وہیں سگے بھائی اور ماموں بھانجے بھی خونی رشتوں کو بالائے طاق رکھ کر سیاسی اکھاڑے میں اترآئے۔ این اے دوسوپانچ سے پیپلزپارٹی اور ن لیگ سے سگے بھائیوں کو آپس میں لڑوانے کا فیصلہ کیا ہے۔ احمد مختار پی پی جبکہ سید احمد ن لیگ کی نمائندگی کریں گے۔این اے دوسونو سےن کے شیفق احمد کھوسو اپنے بڑے بھائی اور فنکشنل لیگ کے امیدوار میرحسن کھوسو سے مقابلہ کریں گے۔این اے ایک سو تہتر سے ڈیرہ غازی خان سے سردارسیف الدین کھوسہ کے مقابلے میں ان کے چھوٹے بھائی دوست محمد خان کھوسہ انتخابات میں حصہ لے رہے ہیں۔سابق اتحادی پی پی اورق لیگ نے بھی دو بھائیوں کولڑوانے کا فیصلہ کیا ہے ۔ پی ایس سڑسٹھ سے نور احمد بھرگڑی کا مقابلہ جمیل احمد بھرگڑی سے ہوگا۔الیکشن دوہزار تیرہ میں ماموں اور بھانجے بھی ایک دوسرے کے مخالف ہوگئے ہیں۔ این اے ایک سو پچپن سےن لیگ کے امیدواراختر کانجو کا مقابلہ ان کے بھانجے آزاد امیدوار عبدالرحمان کانجو سے ہوگا۔این اے دوساٹھ سے الہی بخش سومرو کا مقابلہ اپنے بھانجے محمد میاں سومرو سے ہوگا۔ جبکہ این اے نواسی سے فیصل صالح حیات کا مقابلہ بھی اپنے کزن کے بیٹے عابد امام سے ہوگا۔

یہ بھی پڑھیں  کراچی ،یکے بعد دیگرے دو دھماکوں میں 10افراد جاں بحق اور60سے زائد زخمی

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker