تازہ ترینعلاقائی

داؤدخیل اوراردگرد کےعلاقوں میں بھتہ خوری کی بڑھتی ہوئی وارداتوں نےعوام کوپریشانی میں مبتلا کردیا

داؤدخیل (ضیانیازی سے )داؤدخیل اور اردگرد کے علاقوں میں بھتہ خوری کی بڑھتی ہوئی وارداتوں نے عوا م کو شدید پریشانی میں مبتلا کر دیا داؤدخیل ریلوے اسٹیشن کے قریب شہزاد ٹریڈرز پر صبح ساڑھے سات بجے کے قریب وکیل خان آیا اور دوکان پر کھڑے اعجاز سے بھتہ مانگا جس پر اس نے انکار کیا اور شور سن کر گھر سے شہزاد دوکان پر آیا تو وکیل خان اس کے بھائی کے ساتھ جھگڑ رہا تھا جس پر شہزاد نے پوچھا کہ کیوں تو اس نے کہا کہ بھتہ دو جس پر شہزاد نے کہا کہ ہم بھتہ نہیں دیتے ہیں جس پر بھتہ خور وکیل نے فائرنگ کر دی جو شہزاد کے پیٹ میں لگا جب کہ شہزاد کی جوابی فائرنگ سے وکیل خان بھی زخمی ہو گیا اور زخمی حالت میں موقع سے فرار ہو گیا شہزاد وک فوری طور پر رورل ہیلتھ سینٹر داؤدخیل لایا گیا لیکن موقع پر ہسپتال میں ڈاکٹر نہیں تھا ڈسپینسر عملہ نے زخمی کو فرسٹ ایڈ دی اور گھنٹہ بعد ڈاکٹر طفر کمال ہسپتال پہنچ گئے کیونکہ ان کی رہائش کالاباغ ہے جس کے بعد زخمی شہزاد کو ڈی ایچ کیو ہسپتال میانوالی ریفر کر دیا گیا جب کے زخمی ہونے والا بھتہ خور وکیل خان بھی زخمی حالت میں ہسپتال آیا تو ا س کو فرسٹ ایڈ دیکر موقع پر موجود پولیس نے گرفتار کر لیا جب کہ زخمی شہزاد کی مدعیت میں وکیل خان کے خلاف تھانہ داؤدخیل میں ایف آئی آر درج کر لی واضح رہے کہ داؤدخیل میں بھتہ خوری کی وارداتوں میں دن بدن اضافہ ہو رہا ہے جبکہ کئی افراد ڈکیتوں کے ہاتھ لٹ چکے ہیں

یہ بھی پڑھیں  موجودہ حکومت نے کرپشن کے ریکارڈ توڑ دیئے ہیں،سید علی بخش سابق صوبائی وزیر

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker