بین الاقوامیتازہ ترین

اسلامک مراکز سے دین اور عبادات کے ساتھ ساتھ اصلاح احوال اور دنیا وی تعلیم و تربیت کا اہتمام بھی ازحد ضروری ہے، سلطان نیا ز الحسن

unnamed (1)برمنگھم ( ایس ایم عرفان طا ہر سے ) اسلام دہشتگردی ، انتہا پسندی ، شر انگیزی اور بیگنا ہوں کے قتل کی اجازت ہر گز نہیں دیتا ہے ، اسلامک مراکز سے دین اور عبادات کے ساتھ ساتھ اصلاح احوال اور دنیا وی تعلیم و تربیت کا اہتمام بھی ازحد ضروری ہے ، مسلم امہ کی مجموعی ترقی اور خوشحالی کے لیے حقیقی اسلامی تعلیمات پرعمل پیرا ہو نے کی شدید ضرورت ہے ۔ ان خیالات کا اظہا ر ممتاز روحانی شخصیت و چیئر مین سلطان با ہو ٹرسٹ برطانیہ سلطان نیا ز الحسن قا دری نے ضیا ء الا مہ سنٹر میں منعقدہ ماہانہ محفل پاک گیا رہویں شریف کے شرکاء سے خطاب کرتے ہو ئے کیا ۔ اس موقع پر صاحبزادہ پیر مظہر حسین قا دری ، مولانا محمد تمیز الدین چشتی ،علامہ محمد منیر ، سمیرا فرخ چیئر پرسن بنات المسلمین برطانیہ ، انیلہ اسد وائس چیئرپرسن بنا ت المسلمین برطانیہ ، رانا محمد ناصر ، جنرل سیکرٹری یو کے پی این پی برمنگھم قمر خلیل ، صوفی محمد سخی ، محمد صدیق ، محمد ماجد ، مبین ، محمد ثاقب ، حاجی محمد خالد ، قا ری محمد عثمان ،عاقب رسول ابدالی، فرحان الہیٰ اور دیگر نے خصوصی شرکت کی ۔ مولانا عبد الغفور احمد چشتی نے کہاکہ اولیاء کرام کے مراکز رشد و ہدایت کی درسگاہیں جہاں سے علم و عرفان کی روشنیا ں دنیا میں تقسیم ہوتی ہیں ۔ انہو ں نے کہا کہ ضیاء الامت جسٹس پیر محمد کرم شاہ الا زہری کی امت مسلمہ کے لیے تعلیمی میدان میں گراں قدر خدما ت تاریخ کا ایک سنہری باب ہیں ۔ انہو ں نے کہاکہ آپ نے اپنی ساری زندگی احکاما ت الہیٰ اور اتبا ع رسول ﷺ کے سائے تلے بسر کرنے کا پیغام دیا ۔ انہو ں نے کہاکہ انہی پاک ہستیوں اور بزرگان دین کے زہد و تقویٰ اورمحنت کے صدقے جواں سال نسل کو دینی تعلیمات کو سیکھنے اور سمجھنے میں آسانیا ں فراہم ہوئیں ۔ انہو ں نے کہاکہ ہما ری قوم کا سب سے بڑا المیہ یہ ہے کہ یہ اپنے زندہ لوگوں کی قدر نہیں جا نتی لیکن جب دنیا فانی سے کوچ کر جائیں تو قصیدہ گاتی ہوئی دکھائی دیتی ہے ۔ انہو ں نے کہاکہ اولیاء کرام اور علماء دین کی زندگیوں سے استفادہ حاصل کرنا چا ہیے ۔ انہو ں نے کہاکہ عبادات کی مقبولیت کی یہی ایک نمایا ں نشانی ہے کہ مسلمان مومن کی زندگی میں مثبت طو ر پر تبدل و تغیر دکھائی دے ۔ انہو ں نے کہاکہ عبادات کو پر اثر اور پر مغز بنا نے کے لیے ہمیں اخلاص کی دولت کو اپنا ہو گا تا کہ ہما ری عبادت و ریاضت اور معمولات محض اللہ اور اسکے رسول ﷺ کی رضا اور خوشنودی کے لیے ہوں دکھاوے اور خود نمائی سے اجتنا ب کیا جا ئے ۔ انہو ں نے کہاکہ اولیا ء اللہ سے تعلق رکھنے کا مقصد یہ نہیں کہ مسلمان اپنی عبادات اور دیگر فرائض سے منہ موڑ لے بلکہ اللہ کے نیک بندے تو قرب الہیٰ اور یقین کی دولت سے مالا مال ہو تے ہیں ۔ سابق لارڈ میئر آف برمنگھم کونسلر چو ہدری عبد الرشید نے کہا کہ جواں سال نسل کے لیے تعلیمی و مثبت سرگرمیاں قیمتی سرمائیہ ہیں ۔ انہو ں نے کہاکہ دوسری اقوام سے مقابلہ کرنے اور انہیں اسلام کا حقیقی چہرہ متعارف کروانے کیلیے ہمیں اپنے آپ کو تعلیمی معیار میں بہتر بنانا ہو گا ۔ انہو ں نے کہاکہ انسان اگر محنت اور جہد مسلسل اپنا لے تو وہ دنیا کا ہرمقام و مرتبہ حاصل کرلیتا ہے ۔ انہو ں نے کہا کہ اپنی دنیا و آخرت بہتر بنا نے کے لیے دنیا وی علوم کے ساتھ ساتھ دینی تعلیما ت کو بھی حاصل کرنا ضروری ہے ۔ کونسلر محمد اخلا ق نے کہا کہ نئی نسل کو راہ راست پر لا نے کے لیے سیاسی سماجی مذہبی و دیگر اداروں کو مل کر اپنا موئثر کردار ادا کرنا ہو گا ۔ انہوں نے کہا کہ دہشتگردی ، انتہا پسندی اور منشیات نے ہما ری قوم کا مورال خاصا پست کیا ہے ۔ انہو ں نے کہاکہ خود کو نئے تقاضوں کے مطابق ڈھا لنے اور بہتر مقام حاصل کرنے کے لیے ہمیں مل جل کر دینی و دنیا وی تعلیمات کو مشترکہ طور پر فروغ دینا ہو گا ۔ امام شاہد تمیز انچارج ضیاء الا مہ سنٹر بو زلے گرین نے کہاکہ نوجوان نسل کو بے راہ روی ، گمراہی ، منشیا ت اور عریانی و فحاشی سے محفوظ بنا نے کیلیے انہیں ایسے اسلامک اداروں کے ساتھ منسلک کرنا ہوگا جو ان کو دینی تعلیم کے ساتھ ساتھ تربیت بھی مہیا کریں ۔ انہو ں نے کہا کہ مرشد کامل پیر محمد کرم شاہ الا زہری ؒ نے جو مشن دینی تعلیم و تربیت کے حوالہ سے شروع کیا تھا قیامت کی صبح ہو نے تک اسکی تبلیغ و ترویج کے لیے اپنا کردار ادا کرتے رہیں گے ۔ اس موقع پرپیر محمد عمران ابدالی ، صاحبزادہ پیر نجیب الرحمن فیض پو ری ، صا حبزادہ محمد رفیق چشتی ، علامہ حسنین رضا صدیقی اور دیگر نے بھی خطاب کیا ۔

یہ بھی پڑھیں  راولپنڈی:دیر ینہ دشمنی پر دو گروپوں میں تصادم

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker