تازہ ترینعلاقائی

اوکاڑہ ڈائری ٢جولائی ٢٠١٧

اوکاڑہ ڈائری
محکمہ پولیس اور ریسکیو 1122کی ماہ جون کی کارکردگی
بیوروچیف محمد مظہررشید چوہدری سے
ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر حسن اسد علوی نے کہا ہے کہ مجھے پولیس فورس پر فخر ہے جس نے جانفشانی سے فرائض کی بجاآوری کی ماہ جون میں روایتی ذمہ داریوں کے علاوہ رمضان بازار اور نماز تراویح کے موقع پر مستعدی اور تندی سے اپنے فرائض سرانجام دیے اسی طر ح اس ماہ میں یوم شہاد ت حضرت علیؑ کی مجالس اور جلوس کے لیے خصوصی سیکیورٹی انتظامات کیے گئے جب کہ رمضان المبارک کے آخری عشرہ میں پولیس ملازمین نے 24گھنٹے کی بنیاد پر امن وامان پر توجہ دی کیونکہ آخری عشرہ میں جہاں مساجد میں اعتکاف کا اہتمام ہوتا ہے وہاں بازاروں میں عید خریداری کی وجہ سے بڑی تعداد میں لوگ پہنچتے ہیں اس طرح پولیس نے اپنی عید کی خوشیوں کو قربان کرکے نماز عید کے لیے حفاظتی اقدامات کیے ڈی پی او حسن اسد علوی نے کہاکہ ان تمام اضافی ذمہ داریوں کے باوجود پولیس نے جس طرح ماہ جون میں کارکردگی کا مظاہرہ کیاہے اس پرفخر کے علاوہ اور کیا راستہ ہو سکتا ہے اور یہ فخر ضلع اوکاڑہ کے تمام پولیس افسران اور اہلکاروں کے لیے ہے ڈکیتی کے مختلف واقعات میں فوری اقدامات کیے گئے جس کے دوران دو پولیس مقابلے ہوئے ان مقابلوں میں تین انتہائی خطرناک ڈکیت ہلاک ہوئے ترجمان پولیس کے مطابق ماہ جون میں ناجائزاسلحہ کی برآمدگی کے حوالہ سے پولیس نے121مقدمات درج کئے ہیں جب کہ02 کلاشنکوف ، 08رائفل،14بندوق،89پسٹل،11کاربین اور898گولیاں اورکارتوس برآمد کئے گئے منشیات کے 156مقدمات درج ہوئے جب کہ ملزمان سے 46.028کلوگرام چرس،بوتل شراب،3129 اور 10چالو بھٹی شراب اور ہیروئن 720گرام برآمد ہوئی ہے اوکاڑہ پولیس نے 597 اشتہار ی مجرمان اور216عدالتی مفرران کو گرفتار کیا گیاجو قتل،اقدام قتل، ڈکیتی، راہزنی اور دیگر سنگین مقدمات میں پولیس کو مطلوب تھے گزشتہ ماہ میں مویشی چور ، موٹر سائیکل چور اور سرقہ بالجبر میں ملوث 05گینگ گرفتار کئے گئے جن کے قبضہ سے کروڑوں روپے مالیت کی قیمتی گاڑیاں، موٹر سائیکلیں، مویشی،نقدی،موبائل فون اور گھریلو سامان برآمد کرکے اصل مالکان کے حوالے کیا گیاپنجاب حکومت کی ہدایات پر اور آئی جی پنجاب کے احکامات کی روشنی میں اوکاڑہ پولیس نے نیشنل ایکشن پلان اور آپریشن ردالفساد پر عمل کرتے ہوئے ایمپلی فائر ایکٹ کے06، کرایہ داران کے05 ،حساس تنصیبات آرڈنینس کے تحت 02 مقدمات درج کیں ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر حسن اسد علوی نے کہا ہے کہ جن افسران اور ملازمین نے عمدہ کارکردگی کا مظاہر ہ کیاان کو انعامات سے نوازا جائے گا*۔ریسکیو1122 اوکاڑہ ماہ جون میں 1692 ایمرجنسیز پر ریسپانس کرتے ہوئے 1824 افراد کو ریسکیو کیا۔ ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر ظفر اقبال نے میڈیا بریفنگ میں بتایا کہ ریسکیو1122اوکاڑہ کوگزشتہ ماہ کل 30790کالز محصول ہوئی ہیں جس میں 1692 ایمرجنسی کالز ہیں۔ 15672 غیر متعلقہ ، 12510مس کالز، 556 معلوماتی ، 254 رونگ اور 106 فیک کالز محصول ہوئی ہیں۔ریسکیو1122 اوکاڑہ نے گزشتہ ماہ 1692 ایمرجنسیز پر بروقت ریسپانس کیا ۔ جس میں 628 روڈ ٹریفک حادثات،778میڈیکل، 26 آگ لگنے کے واقعات ،67 کرائم، 1 ڈوبنے کے واقع اور 192 متفرق قسم کے حادثات شامل ہیں۔ روڈ ٹریفک حادثات میں707 افراد متاثر ہوئے جن میں 12 افراد زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے جان بحق ہوئے جبکہ145 افراد کو موقع پر ہی ابتدائی طبی امداد دی گئی اور 550 متاثرین کو طبی امداد دیتے ہوئے ہسپتال میں منتقل کیا گیا۔آگ لگنے کے 46 واقعات ہوئے جن میں 7کمرشل ایریا ، 8 رہایشی علاقے جبکہ 11 واقعات مختلف ایریا میں پیش آئے۔ ان واقعات میں ریسکیو1122 بروقت ریسپانس کرتے ہوئے 23.17Millions کی پراپرٹی کو بچایا۔ مارچ میں پیشنٹ ریفرل سسٹم کے تحت ضلع بھرکے ہسپتالوں سے 405 مریضوں کو بہتر طبی امداد کے حصول کیلئے ریسکیو1122 کے تربیت یافتہ عملہ کے زیرِ نگرانی میں دوسرے ہسپتالوں میں منتقل کیا گیا ۔ریسکیو1122 اوکاڑہ نے گزشتہ ماہ کمیونٹی پروگرامز کے تحت مختلف سکولز ، کالجزاور یونین کونسلز میں بیسک لائف سپورٹ اور فائر سیفٹی کے کورسز کا انعقاد کیا جس میں اب تک ٹوٹل2190لوگوں کو ریسکیومحافظ کے طور پر رجسٹرڈ ہوچکے ہیں۔ ریسکیو1122 نے کسی بھی ناخوشگوار واقع سے نبردآزما ہونے کیلئے ضلع بھر میں قائم رمضان بازاروں اور عیدالفِطرکے دوران مختلف مقامات اور مساجد میں پرٹوکول ڈیوٹیاں سرانجام دی گئیں۔ ریسکیو 1122 نے ماحولیات کے عالمی دن کے موقعہ پرریسکیو اسٹیشن پر آگاہی سیمینار اور واک کا اہتمام بھی کیا۔ ریسکیو1122 اوکاڑہ نے سیلاب سے نبردآزما ہونے کیلئے دوسری فرضی مشق کا انعقاد کیا جس کو اسسٹنٹ ڈائریکٹر پی ڈی ایم اے اور اے ڈی سی (ریونیو)نے تمام ادراوں کی کارکردگی کو جانچا اور اطمینان کا اظہار کیا۔ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر نے بڑھتے ہوئے روڈ ٹریفک حادثات کو مدنظر رکھتے ہوئے عوام سے پرزور اپیل کی ہے کہ ڈرائیونگ کرتے ہوئے اور خاص طور پر موٹرسائیکل کی ڈرائیونگ کرتے وقت حد رفتار سے تجاوز نہ کریں اور ٹریفک قوانین کی پابندی کریں تاکہ حادثات کم سے کم ہوسکیں اورقیمتی جانوں کا ضیاع نہ ہو*

یہ بھی پڑھیں  عدلیہ پر دباؤڈالنے والا یا فیصلوں کی پلاننگ کرنے والاپیدا نہیں ہوا،چیف جسٹس

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker