تازہ ترینعلاقائی

اوکاڑہ : تنویر عرف تنی ڈکیت کو کیفرکردار تک پہنچانے والے پولیس افسران کو ایک لاکھ روپے نقد انعام وسرٹیفکیٹس

اوکاڑہ (محمد مظہررشید چوہدری سے ) تنویر عرف تنی ڈکیت کو کیفرکردار تک پہنچانے والے پولیس افسران کو ایک لاکھ روپے نقد انعام اور سرٹیفکیٹس ۔ ڈسٹرکٹ پولیس آفیسرمحمدفیصل رانا نے میڈیاکے نمائندوں سے خصوصی گفتگوکرتے ہوئے تنویر عرف تنی ڈکیت کے کالے دھندوں کو بے نقاب کیا جوکہ انتہائی خطرناک ڈکیت اورمتعدد بے گناہ افراد کے قتل میں ملوث تھا ۔ گینگ قتل ، ڈکیتی، رابری اور کار چھیننے جیسی وارداتوں میں ملوث تھا۔ "ٹریکنگ آف تنی گینگ ” نقشہ کے زریعہ ڈکیت کے بھاگ جانے کے راستوں اور ٹھکانوں کی نشاندہی کی گئی خطرناک ڈکیت کو کیفرکردار تک پہنچا نے پر پولیس ٹیم کو ایک لاکھ روپے اور سرٹیفکیٹ سے نواز ا گیا میڈیا کے سوالوں کے جواب میں ڈسٹرکٹ پولیس آفیسرمحمدفیصل رانا نے کہا کہ معاشرہ میں بد کرداروں اور برے لوگوں کو بے نقاب کرنے اور جرائم کی روک تھام کی مناسب کوریج پر اوکاڑہ میڈیا کی خدمات قابل فخرہیں آپکی کی مثبت رپورٹنگ سے پولیس زیا د ہ سے زیادہ معلومات حاصل کرکے جرائم پیشہ افراد کامقابلہ کر رہی ہے اس موقع پر ایس پی انوسٹی گیشن امیر سعود مگسی ،تنی گینگ کو کیفر کردار تک پہنچانے والے پولیس افسران اور جوان بھی موجود تھے ڈسٹرکٹ پولیس آفیسرمحمدفیصل رانانے کہا کہ پولیس کے اندر سے بھی بدیانت ملازمین کا کڑا احتساب کیا جا رہا ہے 9 لاکھ روپے خرد برد کا الزام ثابت ہو نے پر بعد انکوائری کے نتیجہ میں سابق اکاؤنٹس برانچ کے انچارچ مظہر علی شاہ، اور اس کے جونئیر زاھد علی، قلب حسین اور ساجد علی کو نوکریوں سے بر طرف کر دیا گیا ہے اوکاڑہ پولیس نے برابری کی اعلیٰ مثال پیش کرتے ہوئے احتساب کا عمل جاری کر رکھا ہے قانون کے سامنے سب برابر ہیں کسی کو کوئی فوقیت حاصل نہ ہے*

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button