تازہ ترینعلاقائی

اوکاڑہ: ضلع میں ملٹی سٹوری عمارتوں کا تیکنیکی آڈٹ کروانے کے لئے اقدامات کئے جائیں . ڈپٹی کمشنر صائمہ احد

اوکاڑہ(بیورورپورٹ)ڈپٹی کمشنر صائمہ احد نے کہا ہے کہ جدید شہری زندگی اور شہروں میں بڑھتی ہوئی آبادی کی بدولت حادثات کی شرح میں بہت اضافہ ہوا ہے اور خصوصاََ آگ لگنے کے واقعات میں قیمتی انسانی جانیں اور املاک کو نقصان پہنچا ہے موجودہ حالات کے تناظر میں تمام متعلقہ سرکاری اداروں کو نہ صرف اپنی استعداد کار میں اضافہ کے لئے جامع حکمت عملی اپنانا ہو گی بلکہ ہمیں فائر فائٹنگ کے شعبہ کو جدید سائنسی بنیادوں پر استوار کرنے کی ضرورت ہے تاکہ کسی بھی حادثہ کی صورت میں عوام کے جان ومال کو بچایا جاسے ریسکیو1122فائر فائٹنگ کا شعبہ اور بلدیہ کا فائر بریگیڈ مشترکہ حکمت عملی سے حادثات سے نپٹنے کے لئے بہتر کاروائی کرے ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے ڈسٹرکٹ فائر سیفٹی کے پہلے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا ۔اس موقع پر ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر چوہدری ظفر اقبال نے فائر سیفٹی کے لئے ریسکیو1122کی استعداد کار ،موجودہ آلات اور مستقبل میں اس شعبہ کی بہتری کے لئے بریفنگ دی انہوں نے ضلع میں بننے والی ملٹی سٹوری بلڈنگوں میں فائر سیفٹی کے لئے اقدامات اور آلات نہ ہونے سے متعلق بتایا جس پر ڈپٹی کمشنر صائمہ احد نے کہا کہ ضلع میں ملٹی سٹوری عمارتوں کا تیکنیکی آڈٹ کروانے کے لئے اقدامات کئے جائیں تاکہ سیفٹی اور آگ لگنے کی صورت میں حفاظتی اقدامات سے متعلق مفصل معلومات دستیاب ہوں اور کسی بھی حادثہ کی صورت میں انسانی جانوں کو بچانے کے لئے موثر اقدامات ممکن ہو سکے انہوں نے کہا کہ انسانی جان کا کوئی متبادل نہیں ہمیں حادثات کی شرح کو کم سے کم سطح پر لانے کے لئے نہ صرف ذمہ دار شہری کا کردار ادا کرنا ہے بلکہ اپنے اداروں کی معاونت بھی کرنی ہے تاکہ وہ بہتر نتائج دے سکیں انہوں نے ڈسٹرکٹ فائر سیفٹی کے اراکین پر زور دیا کہ ضلع میں آگ لگنے کے واقعات کو کم کرنے اور حادثہ کی صورت میں اس پر قابو پانے کے لئے مشترکہ لائح عمل اختیار کرنے سے متعلق موثر اقدامات کئے جائیں انہوں نے ریسکیو 1122کی کارکردگی کو سراہتے ہوئے ڈسٹرکٹ انچارج چوہدری ظفر اقبال کو ہدایت کی کہ وہ ادارہ کی استعداد کار میں اضافہ کے لئے بھی اقدامات کریں۔انہوں نے کہا کہ ڈسٹرکٹ فائر کمیٹی کی ہدایات پر عمل در آمد نہ کرنے والوں کے خلاف کاروائی ہوگی اور متعلقہ عمارت کو سیل کرنے کی سفارش بھی کی جائے گی انہوں نے کہا کہ عمارتوں کے نقشے کی منظوری دیتے وقت فائر سیفٹی میکانزم کے لئے اقدامات کو بھی مد نظر رکھا جائے انہوں نے کہا کہ لوکل گورنمنٹ کے متعلقہ شعبہ جات 38فٹ سے اونچی عمارتوں کا سروے مکمل کر کے رپورٹ پیش کریں اور سرکاری عمارتوں کا فائر سیفٹی آڈٹ کروایا جائے جبکہ ریسکیو 1122اور سول ڈیفنس کے افسران ملٹی سٹوری عمارتوں کی انتظامیہ کی فائر سیفٹی سے متعلق ٹریننگ بھی کروائیں*

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button
error: Content is Protected!!