پاکستانتازہ ترین

پاکستان کا امریکا کو خاموش رہنے کا پیغام

اسلام آباد (بیورو رپورٹ)  پاکستان نے امریکا کو پیغام دیا ہے کہ وہ شمالی وزیرستان میں مجوزہ آپریشن پر بیانات سے گریز کرے۔پاکستانی عہدیداران کے مطابق یہ پیغام اس لئے دیا گیا ہے کیونکہ امریکی حکام کی جانب سے دیئے جانے والے بیانات سے پاکستانی انتظامیہ کے مجوزہ آپریشن کے بارے میں مناسب ماحول کی تشکیل مشکل کا شکار ہوگئی ہے۔نام چھپانے کی شرط پر ایک سنیئر عہدیدار نے بتایا کہ ملک میں امریکی مخالف جذبات بڑھنے کے پیش نظر فوج قبائلی علاقے میں امریکا کے ساتھ مل کر آپریشن کرنے کے حق میں نہیں۔خیال رہے کہ امریکا طویل عرصے سے پاکستان سے شمالی وزیرستان میں حقانی نیٹ ورک کے خلاف آپریشن کا مطالبہ کررہا ہے۔عہدیدار کے مطابق امریکی وزیردفاع لیون پنیٹا کی جانب سے گزشتہ ماہ شمالی وزیرستان میں آپریشن کی منصوبہ بندی کے انکشاف پر پاکستان نے تحفظات کا اظہار کیا ہے۔عہدیدار کا کہنا ہے کہ آرمی چیف جنرل اشفاق پرویز کیانی نے افغانستان میں ایساف کمانڈر جنرل جان ایلن سے جولائی میں ایک ملاقات کے دوران تصدیق کی تھی کہ پاک فوج جلد آپریشن شروع کرسکتی ہے۔امریکی حکام کی جانب سے مجوزہ آپریشن کے بارے میں انکشاف کے بعد پاکستان میں شدید تنقید کا سلسلہ شروع ہوگیا تھا۔اس تنقید کے بعد گزشتہ ماہ جنرل کیانی نے امریکی جنرل جیمز میٹس سے ملاقات کے دوران کہا کہ پاکستان کسی بیرونی دباؤ پر کوئی آپریشن نہیں کرے گا۔حکام کا کہنا ہے کہ فوج کالعدم تحریک طالبان پاکستان کے خلاف نیا محاذ کھولنے کی منصوبہ بندی کررہی ہے مگر وہ نہیں چاہتی کہ یہ تاثر سامنے آئے کہ ایسا امریکی دباؤ پر ہورہا ہے۔

یہ بھی پڑھیں  چنیوٹ پولیس کے منفی رویہ اور رشوت کے خلاف شہری حصول انصاف کیلئے ڈی پی او آفس جا پہنچا

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker