پاکستان

پاکستان کو ڈیڑھ ارب کی ادائیگی باقی: دفتر خارجہ

پاکستان(نیٹ نیوز) پاکستان نے کہا کہ ہے کہ گزشتہ ڈیڑھ سال سے امریکہ نے پاکستان کو ’ کولیشن سپورٹ فنڈ‘ کی مد میں یا دہشت گردی کے خلاف جنگ میں ہونے والے اخراجات کے ضمن میں کوئی ادائیگی نہیں کی ہے اور یہ تقریباً ڈیڑھ ارب ڈالر کی رقم بنتی ہے۔

پاکستان کی وزراتِ خارجہ کے ترجمان عبدالباسط نے بی بی سی کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا ’سنہ دو ہزار ایک کے بعد دہشتگردی کے خلاف جنگ میں ہم نے جو کردار ادا کیا اور اس پر جو ہمارے اخراجات ہوئے’ کولیشن سپورٹس فنڈ‘ ان ہی اخراجات کی ادائیگی ہے۔

یہ بھی پڑھیں  سیالکوٹ: بارش اورژالہ باری نے جاتی سردی کو روک لیا، سردی کی شدت میں اضافہ

جون دو ہزار دس کے بعد سے اس مد میں ہمیں کچھ بھی نہیں دیا گیا۔گزشتہ دس سالوں میں آٹھ اور نو ارب ڈالر کے درمیان ہمیں اس مد میں ادائیگی ہوئی ہے لیکن ابھی بھی تقریباً ڈیڑھ ارب ڈالر کی ادائیگی باقی ہے۔‘

وزرات خارجہ کے ترجمان نے یہ بھی بتایا کہ انھیں یہ رقم کب تک ادا کی جائے گی البتہ ان کا کہنا تھا ’ابھی دیکھتے ہیں کہ صورت حال کس طرح آگے بڑھتی ہے۔‘

یہ بھی پڑھیں  حکومت کا عمران اورطاہرالقادری سے براہ راست رابطوں کا فیصلہ

واضح رہے کہ دسمبر دو ہزار دس میں اسلام آباد میں امریکی سفارتخانے کی طرف سے جاری ہونے ایک بیان میں کہا گیا تھا کہ امریکہ نے پاکستان کو تریسٹھ کروڑ تین لاکھ ڈالر کی رقم ادا کر دی ہے۔

بیان میں کہا گیا تھا کہ یہ رقم جنوری دو ہزار دس سے جون دو ہزار دس تک آنے والے اخراجات کے ضمن میں ادا کی گئی تھی۔

یہ بھی پڑھیں  پندرہ روزہ عوامی بم: پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کی منظوری

اس سے پہلے اسی سال نومبر میں سنہ دو ہزار نو کے اخراجات کے ضمن میں گیارہ کروڑ ڈالر کی ادائیگی کی گئی تھی۔

امریکی سفارت خانے کے اس بیان میں یہ بھی کہا گیا تھا کہ جون سنہ دو ہزار دس تک پاکستان کو ’کولیشن سپورٹ فنڈز‘ میں آٹھ ارب ڈالر سے زیادہ کی رقم کی ادائیگی کی گئی ہے۔

امریکہ اس فنڈ کی مد میں پاکستان سمیت ستائیس ممالک کو ادائیگیاں کرتا ہے۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker