علاقائی

پشین:پریس کلب پشین کو نہ تو بند کرنے اور نہ ہی کسی ممبر کو دھمکی دی گئی ہے

پشین﴿ بیوروچیف/ملک سعداللہ جان ترین﴾ پریس کلب پشین کو نہ تو بند کرنے اور نہ ہی کسی ممبر کو دھمکی دی گئی ہے۔صحافیوں کا آل پارٹیز ،قبائل ، سماجی تنظیموں اور انتظامیہ کے ساتھ اچھے تعلقات ہیں لینڈ مافیا ان تعلقات کو خراب کرنے کی کوشش کررہے ہیں مگر ہم ان کے اس عزائم کو کامیاب نہیں ہونے دینگے ان خیالات کا اظہار صوبائی چیئرمین کونسل آف آل بلوچستان پریس کلبز ملک سعداللہ جان ترین نے پریس کلب پشین میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ پشین کے صحافیوں نے آج تک سرکار کی عاراضی پر ایک انچ قبضہ نہیں کیاسابق تحصیل ناظم سردار مصطفی خان ترین اور ٹی ایم او حاجی سعید احمد نے 2009ئ کو پریس کلب پشین کیلئے سیشن کورٹ کے سامنے سرکاری بلڈنگ دیا جسکے تمام کاغذات صحافیوں کے ساتھ موجود ہیں انہوں نے کہا کہ گزشتہ روز مختلف آفیسروں کو درخواست دی گئی ہے جس میں پریس کلب پشین کو بند کرنے اور صحافیوں کو دھمکیاں ملی ہے حقیقت میں یہ خبرجھوٹی اور من گھڑت ہے پشین کے صحافیوں کا آل پارٹیز ،سماجی تنظیموں،قبائل اور انتظامیہ کے ساتھ اچھے تعلقات ہیں مگر چند ایسے افراد ہیں جو سرکاری کوارٹروں اور عاراضیوں پر پریس کلب پشین کے بورڈ لگاکر قبضہ کرلیتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ شہر میں دو نمبر گاڑیاں چلانے والوں نے بھی گاڑیوں پر پریس بورڈز اوراسٹیکرز لگائے ہوئے ہیں جو پشین کے حقیقی صحافیوں کو بدنام کرنے کی سازش ہے پشین کے صحافیوں نے ضلعی انتظامیہ اور کمشنر کوئٹہ ڈویژن کو نام نہاد صحافیوں کے بارے میں ساری تفصیلات فراہم کی ہے مگر صوبائی وزرائ اور کوئٹہ کے آفیسران کی مداخلت پرتاحال نام نہاد افراد کیخلاف کسی قسم کی کارروائی نہیں ہوئی انہوں نے کہا کہ بلوچستان بھر میں حقیقی صحافیوں کے ساتھ سوتیلی ماں جیسا سلوک کیا جارہا ہے گزشتہ روز نوشکی کے صحافی کیخلاف مقدمہ درج کیا گیا ہے جو سراسر صحافیوں کے ساتھ ظلم و زیادتی ہے حکومت صحافیوں کو تحفظ فراہم کرنے میں مکمل طور پر ناکام ہوچکی ہے صوبائی حکومت کی جانب سے صحافیوں کو کوئی مراحات نہیں دیئے گئے بلوچستان بھر کے صحافی اپنے مدد آپ کے تحت اپنی خدمات سر انجام دے رہے ہیںآخر میں صوبائی چیئرمین کونسل آف آل بلوچستان پریس کلبز ملک سعداللہ جان ترین نے ڈپٹی کمشنر پشین عبدالمنصور کاکڑ سے مطالبہ کیا ہے کہ پریس کلب پشین نز د سیشن کورٹ کے علاوہ صحافیوں کا کسی جگے سے تعلق نہیں ہے شہر میں جہاں بھی سرکاری کوارٹروں پر پریس کلب پشین کے بورڈ آویزاں ہیں اسکو فوری طور بورڈ کو اتارکرکوارٹروں کو اپنے طویل میں لے۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker