تازہ ترینعلاقائی

پشین:اساتذہ کےساتھ اتنا ظلم نہیں ہوا جتنا اب ہوا ہے

پشین﴿بیورو رپورٹ﴾سابقہ دور حکومت میں اساتذہ کے ساتھ اتنی ظلم زیادتی نہیں ہوئی جتنی موجودہ دور حکومت میں ہوئی ہے۔ آل گورنمنٹ ٹیچرز ایسوسی ایشن کا مطالبات پرعملدرآمد نہ ہونے کیخلاف احتجاجی جلسہ زیر صدارت امان اللہ کاکڑ منعقدہوا جلسے سے جمعیت علمائ اسلام کے مولوی کمال الدین عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی رہنما عبید اللہ عابد پشتونخوا ملی عوامی پارٹی کے صوبائی رہنما محمد عیسیٰ روشان جمعیت علمائ اسلام نظریاتی تحصیل امیر مولوی نجیب اللہ ڈویژنل چیئرمین واپڈا ہائیڈرو یونین شاہ نورکاکڑ صدر پیرا میڈیکل اسٹاف فضل الرحمن کاکڑ ایپکائ کے ضلعی صدرمحمد رسول وفا کاکڑ اور دیگر سیاسی مذہبی و ٹریڈیونین تنظیموں کے علاوہ قبائلی و سماجی رہنماؤں نے جلسے میں شرکت کی۔جلسے سے مقررین نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ موجودہ حکومت اساتذہ کے کسی درد کی دوا نہیں اساتذہ کو دور جدید میں بھی کئی گوناگوں مسائل درپیش ہیں جسکی تدارک کیلئے حکومتی سطح پر اقدامات نہیں کئے گئے بلکہ مسائل میں کمی کی بجائے کئی گناہ اضافہ کردیا گیا ہے جو اساتذہ کے ساتھ ساتھ عوام کے ساتھ بھی سراسر ناانصافی ہے انہوں نے کہا کہ تقریباً 20 دنوں سے آل گورنمنٹ ٹیچرز ایسوسی ایشن کے قائدین مطالبات تسلیم نہ کرنے کیخلاف مسلسل احتجاج پر ہیں لیکن صوبے میںقائم مخلوط حکومت میں سے کسی ایک وزیر یا ایم پی اے نے معاشرے میں اہم رول ادا کرنے اور پیغمبرانہ پیشے سے منسلک اساتذہ کے ساتھ کسی قسم کی کوئی ہمدردی تو دور کی بات اظہار یکجہتی تک نہیں کی جو لمحہ فکریہ ہے انہوں نے کہا کہ بلوچستان میں آل پارٹیز اساتذہ کے حقوق کے دعوے دار آل جی ٹی اے کے ساتھ احتجاجی تحریک میں حصہ لیکر کسی قربانی دینے سے گریز نہیں کرئیگی بلکہ ان کے شانہ بشانہ چل کر اساتذہ کے مطالبات پر فوری عمل در آمد نہ ہونے تک چین سے نہیں بیٹھے گے اگر آل جی ٹی اے کے اس احتجاج سے ہمیں کوئی بھی مسئلہ یا پریشانی درپیش ہوئی تو اس کے ذمہ دار موجودہ حکومت ہوگی انہوں نے کہا کہ حالیہ انتخابات میں عوام سے ووٹ لیتے وقت کئے گئے وعدوں کو تاحال کسی نے پورا نہیں کیا صوبہ بلوچستان کے اکثر اضلاع میں ٹیچرز ایسوسی ایشن میں ایک سازش کے تحت اختلافات پیدا کئے جارہے ہیں جو اساتذہ کے ساتھ سراسر زیادتی ہے انہوں نے کہا کہ اگر آل جی ٹی اے کا مطالبات تسلیم نہیں کئے گئے تو آل پارٹیزمذکورہ تنظیم کے ساتھ مل کر سخت سے سخت احتجاج کرنے پر مجبور ہوجائیگی ۔

یہ بھی پڑھیں  خون کا عطیہ کسی کی زندگی بچا سکتا ہے

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker