تازہ ترینعلاقائی

پاکستان دو قومی نظریہ کی بنیاد پر معرض وجود میں آیامگرآج بدقسمتی سے دو قومی نظریہ کو مٹانے کی کو شش کی جارہی ہے

بھائی پھیرو(نامہ نگار) پاکستان دو قومی نظریہ کی بنیاد پر معرض وجود میں آیا مگرآج بدقسمتی سے دو قومی نظریہ کو مٹانے کی ناپاک کو شش کی جا رہی ہے ۔بھارت کو موسٹ فیورٹ نیشن قراردے کرسرحد کو ختم کرنے کی باتیں کی جارہی ہیں۔ان حالات میں نئی نسل کو نظریہ پاکستان سے آگاہ کر نا انتہائی ضروری ہے ۔ان خیا لات کا اظہار حیدر نورانی کی رہائش گاہ پر جمعیت علماء پاکستان کے رہنما علمائے اکرام نے میڈیا سے گفتگو کرتے کیا ۔علامہ غلام حسن نورانی،چوھدری عباس جاوید ، حافظ مقصود احمد ،سید ذاکر حسین شاہ اور دیگرمقررین نے کہا کہ قیام پاکستان کیلئے پیرجماعت علی شاہ،مولانانعیم الدین مرادآبادی ، مولانا عبدالحامد بدایونی،مولاناشاہ عبدالعلیم صدیقی،مولاناعبدالستارنیازی اورہزاروں علماء ومشائخ ا ہلسنت نے ہراول دستے کا کام کیا۔برصغیربھر میں سنی کا نفرنسیں کرکے قیام پاکستان کیلئے راہ ہموار کی ۔انھو ں نے کہا آج پاکستان مخالف قوتیں ملک کے امن کو تباہ کر رہی ہیں اورنظریہ پاکستان کو ختم کرنے کے در پے ہیں۔ قیام پاکستان کی مخالفت کرنیوالے آج پھر اپنے مذموم مقاصدکی تکمیل کیلئے سرگرم ہیں۔ان حالات میں قیام پاکستان کے حامی اہلسنت کو آگے بڑھ کر مخالفین پاکستان کا راستہ روکنا ہوگامقررین نے کہا 68 سال گزرنے کے بعد بھی پاکستان اپنے اساسی مقاصد حاصل نہیں کر سکااس کیلئے ہمیں متحد ہو کرکام کرنے کی اشد ضرورت ہے۔ہمیں اللہ تعالیٰ سے اجتماعی توبہ کر کے پاکستان میں نظام مصطفٰےﷺکے نفاذکیلئے بھرپورجدوجہدکرنے کا عزم کرناہو گا۔ انھوں نے دہشت گردوں کے خلاف جاری آپریشن ضرب عضب کی کامیابی پر فوج کوخراج تحسین پیش کیا ۔

یہ بھی پڑھیں  ٹیکسلا:نبی اکرم کی شان اقدس میں ادنہ سی گستاخی بھی اللہ رب العزت برداشت نہیں کرتا

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker