شہ سرخیاں
بنیادی صفحہ / تازہ ترین / نامعلوم تیس سالہ نوجوان سول ہسپتال بھائی پھیرو میں کئی گھنٹے تڑپنے کے بعد چل بسا

نامعلوم تیس سالہ نوجوان سول ہسپتال بھائی پھیرو میں کئی گھنٹے تڑپنے کے بعد چل بسا

بھائی پھیرو(نامہ نگار) نامعلوم تیس سالہ نوجوان سول ہسپتال بھائی پھیرو میں کئی گھنٹے تڑپتا رہا ۔لاہور لے جاتے ہوئے راستے میں دم توڑ گیا ۔تفصیلات کے مطابق بھائی پھیرو کے نواحی ویران کھیتوں میں ایک تیس سالہ نامعلوم نوجوان زندگی اور موت کی کشمکش میں مبتلا تھاکہ کسی خدا ترس شخص نے اسے اٹھا کر سول ہپسپتال بھائی پھیرو پہنچا دیا جہاں پر بیمار نوجوان کئی گھنٹے لا علاج بے یارو مدد گار تڑپتا رہا مگرہسپتال کے بے رحم عملہ اور ڈاکٹروں نے اسکے علاج معالجے کی طرف کوئی توجہ سے دی با لاآخرکئی گھنٹوں بعد نوجوانکی جان لبوں تک آئی تواسے لاہور ہستپال بھیج دیا گیا مگر و ہ راستے میں ہی دم توڑ گیا ۔ مقامی پولیس نے لاش قبضے میں لے کرضروری قانونی کاروائی شروع کردی ۔ہسپتال میں موجود عینی شاہدین کا کہنا ہے اگر ہسپتال کا عملہ بر وقت علاج کر دیتا تو نوجوان کی جان بچ جاتی۔پولیس ذرائع کے مطابق نا معلوم شخص کا کچھ پتا نہیں چلا کہ وہ کہاں کا رہائشی ہے ۔پولیس ورثاء کی تلاش میں ہے۔

یہ بھی پڑھیں  پھول نگر:مقامی انتظامیہ کی ملی بھگت سے لگائے جانے والے منگل بازار، بدھ بازاراور اتوار بازارسیکورٹی رسک بن گئے