شہ سرخیاں
Home / تازہ ترین / بھائی پھیرو:تنظیم الائمہ اہل مدارس بھائی پھیرو کے زیراہتمام تحفظ ختم نبوت کانفرنس میں عوام کی کثیر تعداد میں شرکت

بھائی پھیرو:تنظیم الائمہ اہل مدارس بھائی پھیرو کے زیراہتمام تحفظ ختم نبوت کانفرنس میں عوام کی کثیر تعداد میں شرکت

بھائی پھیرو(نامہ نگار) تنظیم الائمہ اہل مدارس بھائی پھیرو کے زیر اہتمام تحفظ ختم نبوت کانفرنس میں عوام کی کثیر تعداد میں شرکت۔ ختم نبوت کے حلف کو آئین سے نکالنے کی منظم سازش کرنے والوں کو بے نقاب کیا جائے اور توہین رسالت کے جرم میں مقدمہ درج کیاجائے۔علما اور سیاسی رہنماؤں کا مطالبہ۔ختم نبوت کے بارے علما کی تجاویز کے بارے اپنی پارٹی میں آواز بلند کرونگا ممبرقومی اسمبلی رانا محمد حیات خاں کا خطاب ۔تفصیلات کے مطابق بھائی پھیرو تنظیم الائمہ اہل مدارس بھائی پھیرو کے زیر اہتمام تحفظ ختم نبوت کانفرنس میں عوام کی کثیر تعداد نے شرکت کی ۔ معروف عام دین اور تنظیم الائمہ اہل مدارس بھائی پھیرو کے جنرل سیکرٹری مولانا عبدالعزیز فاروقی کی قیادت میں منعقدہ حنیف شادی ہال میں تحفظ ختم نبوت کانفرنس سے معروف دینی رہنماؤں اور علمائے اکرام ،عالمی مبلغ تحفظ ختم نبوت مبلغ اسلام مولانا محمد اسماعیل شجاع آبادی،ممبر قومی اسمبلی رانا محمد حیات خاں،مولانا عبدالعزیز فاروقی،جماعت اسلامی پی پی 184کے امیر مقبول حسین کمبوہ سمیت اور دیگر مقامی علما،مذہبی سکالروں،صحافیوں،کسان رہنماؤں اور تاجروں نے کیا ۔کانفرنس میں شدید سردی کے باوجود عوام کی بھاری تعداد نے شرکت کی۔علمائے اکرام نے متنازعہ ختم نبوت بل پاس کرانے پر حکومت کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ بعض لوگ غیروں کو خوش کرنے کیلیے ہمارے متفقہ قانون سے اسلامی قوانین کو ختم کرنے کی سازش کر رہے ہیں۔مبلغ اسلام مولانا محمد اسماعیل شجاع آبادی نے کہا محض کلیریکل غلطی قرار دے کر اتنے بڑے معاملے کو دبایا نہیں جاسکتا۔ کروڑوں مسلمانوں کے جذبات کو ٹھیس پہنچانے والے کسی رعایت کے مستحق نہیں۔ عقیدہ ختم نبوت ہر مسلمان کے ایمان کا حصہ ہے جس پر کوئی مصلحت برداشت نہیں کی جاسکتی۔جماعت اسلامی کے مقامی امیر مقبول حسین کمبوہ نے کہا کہ اداروں کی ایک دوسرے کو نیچا دکھانے اور ایک دوسرے پر الزامات لگانے کی کوششیں ملک اور جمہوریت کے لیے نقصان دہ ہیں اس لیے تمام اداروں کو اپنے دائرہ کار میں رہتے ہوئے ملک و قوم کی خدمت کرنی چاہیے۔ انہوں نے کہاکہ ممبران پارلیمنٹ کے امیدواروں کے حلف کو بدلنے اور 148 حلفاً 147 کا لفظ نکالے جانے کی تحقیقات کی جائیں اور مجرموں کو بے نقاب کر کے قرار واقعی سزا دی جائے تاکہ آئندہ کسی کو عقیدہ ختم نبوت میں نقب لگانے کی جرا ت نہ ہو۔ انہوں نے کہاکہ حکومت ایسی انتہائی گھناؤنی سازش کو محض املاء یاکمپوزنگ کی غلطی قرار دے کر بری الذمہ نہیں ہوسکتی یہ انتہائی سنجیدہ معاملہ ہے جس سے صرف نظر نہیں کیا جاسکتا۔تحریک ختم نبوت کے رہنما تنظیم الائمہ اہل مدارس بھائی پھیرو کے جنرل سیکرٹری مولانا عبدالعزیز فاروقی نے کہا کہ ملک میں افراد اور خاندانوں کی بجائے آئین و قانون کی بالادستی ہونی چاہیے ۔انہوں نے کہا کہ تحریک ختم نبوت کیلیے مسلمانان پاک و ہند نے ہزاروں جانوں کے نزرانے پیش کیے ہیں اور یہ قانون ہمارے ایمان کا حصہ ہے اس قانون کو ختم کرنے والے عبرت کا نشان بن جائیں گے۔ممبر قومی اسمبلی رانا محمد حیات خاں نے کہا کہ ختم نبوت ہمارے ایمان کا حصہ ہے انہوں نے کہا کہ وہ علمائے اکرام اور مسلمانوں کے جزبات کو اپنی پارٹی میں اٹھائیں گے اور ہر فورم پر ختم نبوت کے قانون کو اسکی اصل شکل میں بحالی کیلیے آواز اٹھائیں گے اور اسمبلی میں بھی اپنا بھرپور کردار ادا کریں گے ۔

x

Check Also

ختم نبوت سے متعلق تحفظات پر سمجھوتا نہیں ہوسکتا: پیر نظام الدین جامی

اسلام آباد(بیورو رپورٹ) سجادہ نشین گولڑہ شریف پیر نظام الدین جامی نے ...

Connect!