تازہ ترینعلاقائی

بھائی پھیرو کی حدود میں سنوکر کلب کی آڑ میں کھلے عام جواء ،منشیات بکنے لگی

phool negarبھائی پھیرو(نامہ نگار) تھانہ سٹی بھائی پھیرو میں حرام خور عملے کی حرام خوری کے باعث تھانہ سٹی بھائی پھیرو کی حدود میں سنوکر کلب کی آڑ میں کھلے عام جواء ،منشیات بکنے لگی ۔نوجوان نسل بے راہ روی کا شکار اور مستقبل برباد ہورہا ہے خواتین کو گھریلو اشیاء کی خریداری کیلئے گھر سے نکلنا مشکل ہوگیا سنوکر پر غنڈہ عناصر آنے جانے والی باپردہ خواتین کو فحش مذاق کرنا اپنا فرض سمجھنے لگے پولیس اہلکاروں کی آنکھیں منتھلی کی سیاہ پٹی سے بند ہوکر رہ گئیں تفصیلات کے مطابق بھائی پھیروتھانہ سٹی کے قریب محلہ جوئیانوالہ نزد نیو پارک کے بااثر منشیات فروش جو عرصہ دراز سے مقامی پولیس کی بھرپور خدمت کے بدلے کھلے دھڑلے سے یہاں محلہ میں سنوکر کلب کی آڑ میں منشیات اور جوئے کا دھندہ کررہا ہے سنوکر کلب چوک میں ہونے کی وجہ سے سکول میں جانے والے بچے سکول جانے کی بجائے سنوکر کھیلتے رہتے ہیں جبکہ محلہ کی دوکان اور بازار سے سودا سلف کی خرید کیلئے محلہ کی خواتین کو اسی چوک سے گذرنا پُل صراط سے گذرنے کے مترادف ہے یہاں سنوکر کلب پر موجود آوارہ اور غنڈہ عناصر باپردہ خواتین کو فحش مذاق کرتے ہیں جس سے انہیں انتہائی کوفت سے گذرنا پڑتا ہے اہل محلہ نے متعدد بار سنوکر کلب کے مالک کو اس دھندے کے خاتمے کیلئے کہا مگر وہ دھندہ ختم کرنے کی بجائے محلہ داروں کی اپنے ساتھیوں کے ہمراہ تزلیل کرتا ہے اور سخت زبان استعمال کرتے ہوئے کہتا ہے کہ جسے اعتراض ہو وہ محلہ چھوڑجائے اس مسئلہ کے ازالہ کیلئے تھانہ سٹی بھائی پھیروکے تھانیدار کو تحریردرخواست دی گئی مگر اس نے خدمت کے صلے میں محلہ داروں کی حوصلہ افزائی کی بجائے بااثر منشیات فروش کو کھلے عام دھند کرنے کا لائسنس دے دیا یہاں یہ امر قابل زکر ہے کہ ڈی آئی جی شیخوپورہ رینج ذوالفقار احمد چیمہ ،ڈی پی او قصور سید خرم علی شاہ کے خصوصی ایکشن پر یہاں بھائی پھیرو سے سنوکر کلبوں ،منشیات فروشوں ،جواء کے اڈوں ،کے خلاف ایکشن لینے پر یہ دھندے کسی حد تک ختم ہوگئے تھے اور منشیات فروش جواری علاقہ چھوڑنے پر مجبور ہوگئے تھے ۔کلثوم اختر سابق ڈسٹرکٹ کونسل ممبر بھائی پھیرو قصور نے تحریری درخواست گذارتے ہوئے محلہ سے دھندے کے خاتمے کا مطالبہ کیا ہے

یہ بھی پڑھیں  ڈاکٹر عاصم مزید 7 روز کےلئے جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker