شہ سرخیاں
بنیادی صفحہ / تازہ ترین / بھائی پھیرو:زبردستی بچے اُٹھانے پر لوگوں کا پولیس اور سسرال والوں کے خلاف ملتان روڈ بلاک کر کے شدید احتجاج

بھائی پھیرو:زبردستی بچے اُٹھانے پر لوگوں کا پولیس اور سسرال والوں کے خلاف ملتان روڈ بلاک کر کے شدید احتجاج

بھائی پھیرو(نامہ نگار)زبردستی بچے اُٹھانے پر لوگوں کا پولیس اور سسرال والوں کے خلاف ملتان روڈ بلاک کر کے شدید احتجاج ۔ تین آدمی زخمی تفصیلات کے مطابق نواحی گاؤں جمبر کلاں کے رہائشی ملک بشیر کی بیٹی زینب بی بی کی شادی چند سال قبل ہوئی اور اس کے بطن سے چھ بچے پیدا ہوئے ۔ ایک سال قبل زینب اپنے سسرال والوں سے لڑ جھگڑ کر چار بچے طوبہ ، ولید حسن ، فاطمہ بی بی اور وحید حسن ساتھ لے کر اپنے ماں باپ کے گھر جمبر آگئی جبکہ دو بچے زوہیب حسن اور شائشتہ سسرال کے گھر چھوڑ آئی ۔ بائیس روز قبل قضائے الہی سے وفات پا گئی ۔ گذشتہ روز زینب کا خاوند فیاض پولیس کو ساتھ لے کر بچے اُٹھانے کے لئے جب جمبر کلاں ملک بشیر کے گھر آئے تو پوری بستی کے لوگوں نے پولیس اور سسرال والوں کی غنڈہ گردی پر ان پرحملہ کر دیا اور اینٹیں مار مار کر سسرال والوں کے ایک آدمی کا سر پھاڑ دیا اور فیاض کی گاڑی کے ڈنڈے ما ر مار کر شیشے توڑ دیئے ۔ پولیس والوں نے بھی لاٹھیاں مار مار کر حملہ کرنے والے ایک شخص کا سر پھاڑ دیا اور زبرستی بچے اُٹھا کر جمبر چوکی لے آ ئے ۔ دن دیہاڑے کھلم کھلا پولیس گردی اور غنڈہ گردی کے خلاف مشتعل ہو کر سینکڑوں لوگ ملتان روڈ پر آ گئے اور ملتان روڈ بلاک کر دی کافی دیر روڈ بلاک رہنے سے ٹریفک کی میلوں لمبی لائینیں لگ گئیں بالاخر موٹر وے پولیس کے ایڈ من افسر رانا طارق نے مظاہرین اور پولیس والوں کو سمجھا بجھا کر بچے واپس کر کے سڑک کھلوائی ۔جب اس سلسلے میں ایس ایچ او تھانہ صدر بھائی پھیرو ملک محمد اشرف نول سے پوچھا گیا تو انہوں نے کہا کہ بچوں کے باپ فیاض نے ایڈیشنل سیشن جج پتوکی جناب غلام رسول صاحب کی عدالت سے بچوں کی بازیابی کا حکم نامہ لے رکھا تھا ہم جمبر پولیس عدالت کے حکم پر بچے بازیاب کرانے گئے ۔

یہ بھی پڑھیں  عوام پر ایک اور بم گرادیا، پٹرول ایک روپے 46 پیسے مہنگا کر دیا گیا،اوگرا نے منظوری دیدی