پاکستان

پھولنگر: راحیلہ کوثر پرنسپل گورنمنٹ ڈگری کالج( برائے خواتین )پھولنگر کی کرپشن کی انتہا

پھولنگر(ڈیسک نیوز) گورنمنٹ ڈگری کالج برائے خواتین کی پرنسپل راحیلہ کوثر نے کرپشن کی انتہا کردی۔ کالج میں سی ٹی آئی (عارضی لیکچرار) کونومبر 2010میں بھرتی کیا ۔ اب سات ماہ بعد جب ان کی تنخواہ دینے لگی تو ان فون کرکے بلایا گیا کہ اپنی تنخواہ لے جائیں۔ جب وہ تنخواہ لینے پہنچی تو ان سے چار ہزار افی لیکچرار ڈیمانڈ کی ۔ جب انہوں نے پیسے دینے سے انکار کیا تو اس نے تنخواہ دینے سے بھی انکار کردیا اور کہا کہ تمھارے بل پاس کرانے کے لیے میری سی این جی خرچ ہوئی ہے۔ جب یہ بات میڈیا میں آئی تو پرنسپل نے فون سننے کی بجائے اپنا فون محمد سہیل کئیر ٹیکرکو دے دیا جس نے اپنا تعارف کرانے کے بعدبات کرنے کی بجائے فون بند کردیا۔ پرنسپل نے وہاں پر موجود ٹیچر ز سے کہا کہ اب یہ میڈیاکو بتا رہی ہیں تو مجھ سے تنخواہ لیکر دکھائیں۔ہم نے ظفراللہ بھٹی ڈی ای او کالجز سے رابطہ کیا تو انہوں نے اپنا ای میل ایڈریس بھیجا اور کہا کہ اس پر درخواست بھیجیں۔ یاد رہے اس ہی پرنسپل نے 2011میں ایف اے کے رجسٹریشن فیس میں کالج کے کلرک مسرت کے ساتھ ملکر لاکھوں کا فراڈکیا تھا۔ لیکن کوئی ایکشن نہ ہونے کی وجہ سے آج پھر یہ پھولنگر کی طالبات اور ٹیچر ز کو لوٹ رہی ہے۔

یہ بھی پڑھیں  مظفرآباد:بچوں کوتحفظ فراہم کرنیوالی این جی اوز کی آڑمیں بیرون ملک منہ مانگی قیمت پرفروخت کرنے کاانکشاف

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker