پاکستانتازہ ترینرپورٹس

قومی ائر لائن میں 13ارب روپے سالانہ خسارہ کے باوجود 6ہزار سے زائد اضافی ملازمین کی موجودگی کا انکشاف

piaاسلام آباد( بیورو رپورٹ)13 ارب روپے سالانہ خسارے میں چلنے والی پاکستان انٹرنیشنل ائر لائنز ( پی آئی اے ) میں اس وقت ضرورت سے 6ہزار 116اضافی ملازمین کام کررہے ہیں ، پی آئی اے میں 17,410 ملازمین کی ضرورت ہے جبکہ اس وقت 20,468 ملازمین موجود ہیں اس کے علاوہ 3058 ملازمین روزانہ اجرات پر بھی کام کررہے ہیں ،پی آئی اے میں ایک جہاز کے ساتھ 357 ملازمین کا سٹاف ہے جبکہ عالمی معیار 150ملازمین فی جہاز ہے ۔ پی آئی اے سے حاصل اعدادوشمار کے مطابق ادارے پر اس وقت 6ہزار 116 اضافی ملازمین کا بوجھ ہے جن کی تنخواہوں اور مراعات کی مدمیں پی آئی اے کو سالانہ 1ارب 10 کروڑ روپے سے زائد کی رقم خرچ کرنا پڑتی ہے ۔ پی آئی اے میں درکار ملازمین کی تعداد 17ہزار 410 ہے جبکہ اس وقت مجموعی طور پر ادارے میں 23ہزار 526 ملازمین کام کررہے ہیں جن میں سے 3ہزار 58 افراد ڈیلی ویجز ( روزانہ اجرت) پر کام کررہے ہیں ایک اندازے کے مطابق پی آئی اے کو اضافی ملازمین کے لیے تنخواہوں اور مراعات کی مد میں سالانہ 1ارب 10 کروڑ روپے سے زیادہ رقم اضافی خرچ کرنا پڑتی ہے واضح رہے کہ اس وقت پی آئی اے کا خسارہ ساڑھے تین کروڑ روپے روزانہ ہے جو کہ ایک ارب روپے سے زائد ماہانہ بنتا ہے دوسری جانب پی آئی اے انتظامیہ نے آئندہ ایک سال کے دوران تین ہزار ملازمین کو مرحلہ وار فارغ کرنے کا پروگرام بنایا ہے تاہم موجودہ حکومت اس سال ہونے والے انتخابات کے پیش نظر کسی بھی ملازم کو فارغ کرنے کے حق میں نہیں ہے ۔ اعدادوشمار کے مطابق پی آئی اے میں اس وقت ایک جہاز کے ساتھ 357 ملازمین کا عملہ موجود ہے جبکہ سول ایوی ایشن کے عالمی معیار کے مطابق ایک جہاز کے لئے 150 افراد پر مشتمل عملہ کی ضرورت ہوتی ہے ۔

یہ بھی پڑھیں  اوکاڑہ : مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کے خلاف آج ضلع بھر میں یوم سیاہ منایا گیا

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker