تازہ ترینعلاقائی

پنڈی گھیب میں نام نہاد جعلی صحافیوں کی بھرمار، چند سرکاری ملازمین بھی صحافی بن کر اپنی کرپشن کو چھپانے لگے

پنڈی گھیب ﴿نامہ نگار﴾ پنڈی گھیب اور گردونواح میں جعلی صحافیوں کی بھرمار ، اپنی کرپشن کو چھپانے کیلئے چند سرکاری ملازمین بھی صحافی بن گئے۔ موٹر سائیکلوں ، گاڑیوں اور رکشوں پر بھی پریس کی نمبر پلیٹیں سج گئیں۔ انتظامیہ خاموش تماشائی۔تفصیلات کے مطابق پنڈی گھیب میں جعلی صحافی متحرک ، سرکاری محکموں ، تعلیمی اداروں ، و دیگر محکموں میں جاکر سرکاری اہلکاروں کو بے جا پریشان کرنے لگے، اور بلیک میل کرکے مختلف قسم کے فائدے اٹھانے کی کوشش کرنے لگے۔پنڈی گھیب میں کچھ سرکاری ملازمین بھی نام نہاد صحافی بن کر اپنے ہی محکموں کو بلیک میل کرنے میں مصروف اور صحافت جیسے پیغمری اور مقدس پیشہ کو بدنام کرکے اپنے ہی سرکاری محکمے کے افسران کو بلیک میں کرکے مختلف قسم کے فائدے اٹھانے لگے۔سرکاری ڈیوٹی کے اوقات میں یہ چند سرکاری ملازمین صحافی بن کرمختلف قسم کی پریس کانفرنس ، سرکاری و نجی اداروں میں مختلف قسم کی تقریب اور خاص طور پر سیاسی پارٹیوں کے رہنمائوں کی پریس کانفرنس اور جلسے جلسوں میں شرکت کرکے ان کی پریس کوریج کرتے ہیں۔ یہ سرکاری ملازمین اپنی سرکاری ملازمت کے ساتھ بھی بے وفائی کر رہے ہیں صبح سویرے دفتر میں حاضری لگا کر سار ا دن کیلئے غائب ہو جاتے ہیں اپنے ذاتی کام نمٹاتے ہیں انہیں کوئی پوچھنے ولا نہیں ہے کیونکہ ان سرکاری ملازمین نے صحافت کی آڑ لی ہوئی ہے اسی وجہ سے ان کے افسران ان سے ڈرتے ہیں کہ کہیں یہ ہمارے خلاف اخبار میں خبر نہ شائع کر دیں ۔پنڈی گھیب کے سماجی ، کاروباری ، عوامی اور سرکاری حلقوں نے کہا ہے کہ ہمیں ایسے عناصر کی نشاندہی کرکے ان کی حوصلہ شکنی کرنی ہو گی ،جو صحافی خود سرکاری ملازمین ہو کر صحافت کی آڑ لے کر اپنے ہی محکموں میں کرپشن کر رہے ہیں اور انہیں کوئی بھی پوچھنے والا نہیں ۔ سرکاری ملازم ہو کر صحافی بن کر صحافت کا ناجائز استعمال کر رہے ہیں وہ عوام کے مسائل کیا اجاگر کریں گے۔حکومت کو چائیے کہ ایسے ملازمین کو سرکاری ملازمت سے فوری طور پر نکالنے کے احکامات جاری کریں اور انتظامیہ کو بھی چاہئے کہ ان نام نہاد صحافیوں کے خلاف فوری کاروائی کریں ، ایسے کرپٹ صحافیوں کا داخلہ سرکاری اداروں میں ممنوع کیا جائے تاکہ صحافت پر عوام کا اعتماد قائم رہے۔ شعبہ صحافت میں پڑھے لکھے ،ایماندار اور خلوص نیت سے کام کرنے والوں کی اشد ضرورت ہے۔

یہ بھی پڑھیں  بھارتی کارگو طیارے کی اسلام آباد انٹرنیشنل ایئر پورٹ پر ہنگامی لینڈنگ

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker