تازہ ترینعلاقائی

جھنگ: تھانہ قادر پور پولیس نے پولیس گردی کی انتہا کر دی

جھنگ(تحصیل رپورٹر)تھانہ قادر پور پولیس نے پولیس گردی کی انتہا کر دی ،کرپشن کے بے تاج باد شاہ سب انسپکٹرسکندر حیات کی زیر سر پرستی کرپٹ ترین کانسٹیبل نعیم سلیانہ،تقی شاہ اور مرید شاہ نے اغواہ برائے تاوان کا مکرہ دھندہ شروع کر دیا۔ تفصیلات کے مطابق موضع جھوک عثمان کے احمد حیات ولد شیر محمدقوم رمانہ کو سول کپڑوں میں اغواء کر کے موضع بھمب کے قریب اپنے ذاتی ٹارچر سیل میں قید کر دیا،جہاں پہ کھنڈرات نماء بھینسوں کا بوسیدہ طبیلہ تھا،مغوی کو بھینسوں کے ساتھ باندھ کر اُس کی جیب سے 400روپے نقد اور دیگر ضروری کاغذات نکال لئے اور اُس کے وارثین کو فون کر کے کہا کہ نقدی پانچ ہزار روپے لے آؤ اور احمد حیات کو لے جاؤ،جس پر محمد حیات،ظفر اقبال،محمد یوسف،محمد رمضان،احمد شیر اورمحمد وارث موضع بھمب کے پولیس ٹارچر سیل پر پہنچ گئے،وہاں پرموجود کانسٹیبل تقی شاہ اور مرید شاہ کو پانچ ہزار روپے نقدی دے کر مغوی کو بازیاب کروا لیا،تقی شاہ نے پیسوں کی مزید ڈیمانڈ کرتے ہوئے مغوی احمد حیا ت کے وارثین سے ہاتھا پائی شروع کر دی،درِیں اثناء تقی شاہ نے ظفر اقبال ولدمحمد سلطان رمانہ کی بائیں آنکھ پہ زور دار مُکا دے مارا،مُکا لگتے ہی آنکھ سے خون جاری ہو گیا،تقی شاہ گھبرا کر جاہِ وقوعہ سے بھاگ نکلا،سابقہ ایم پی اے افتخار خان بلوچ کے ساتھ ملکر SHOتھانہ ہذا چوہدری حاکم علی سے شکایت کی گئی پر کوئی اثر نہ ہوا اور جواب ملا کہ ایسے ہزاروں پولیس کیس ہوتے رہتے ہیں،پھر سابقہ ایم پی اے کے ساتھ DPOجھنگ کو پیش ہو کر پولیس گردی کی شکایت کی مگر DPOجھنگ نے بھی ٹال مٹول کر واپس بھیج دیا۔پولیس گردی اور کرپشن کا نشانہ بننے والے ظفر اقبال،احمد حیات اور اُن کے لواحقین اور علاقہ مکینوں نے پولیس کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے چیف جسٹس آف پاکستان،چیف آف آرمی سٹاف جنرل راحیل شریف،وزیر اعلٰی پنجاب میاں محمد شہباز شریف،وزیر اعظم آف پاکستان میاں محمد نواز شریف اور آئی جی پنجاب مشتاق سکھیرا سے پُر زور اپیل کرتے ہوئے ان کرپٹ پولیس اہلکاروں اور افسران کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کیا۔

یہ بھی پڑھیں  عمران خان کا پھر حملہ،افتخارچودھری اس دھاندلی میں ملوث تھےعمران خان کا پھر حملہ

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker