پاکستانتازہ ترین

پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ ن کے درمیان مذاکرات پھر ملتوی

اسلام آباد(بیورو رپورٹ) پیپلزپارٹی اور مسلم لیگ ن کے درمیان اسلام آباد میں ہونے والے مذاکرات ایک بار پھر ملتوی ہوگئے ،مسلم لیگ کے رہ نما اسحاق ڈار کا کہنا ہے کہ پیپلز پارٹی سے کسی بھی وقت اور کسی بھی جگہ بات چیت ہوسکتی ہے۔ تاہم حکمران جماعت نے عام انتخابات 15مارچ سے 15 اپریل تک منعقد کرانے کی تجویز مسلم لیگ ن کو دے دی ہے۔پیپلزپارٹی اور مسلم لیگ ن کے درمیان منگل کو مذاکرات ہونا تھے تاہم وفاقی وزیر سید خورشید شاہ کی کراچی میں مصروفیات کے باعث یہ مذاکرات بدھ تک ملتوی کردیئے گئے تھے تاہم بدھ کو بھی سید خورشید شاہ کی سندھ سے آمد میں تاخیر کی وجہ سے مذاکرات ملتوی کردیئے گئے۔ مذاکرات کی نئی تاریخ کا تعین بعد میں کیا جائے گا۔مسلم لیگ ن کے رہ نما اسحاق ڈار نے میڈیا کو بتایا کہ پیپلز پارٹی سے کسی بھی وقت اور کسی بھی جگہ بات چیت ہوسکتی ہے اس میں کوئی حرج نہیں۔ان کی جماعت تمام معاملات پر کھلے ذہن کے ساتھ بات کرے گی تاہم دیکھنا یہ ہوگا کہ پیپلز پارٹی والے ملاقات میں کہتے کیا ہیں۔جبکہ ذرائع کا کہنا ہے کہ پاکستان پیپلز پارٹی نے غیر رسمی رابطوں میں مسلم لیگ ن کوعام انتخابات 15 مارچ اور 15 اپریل کے درمیان منعقدکرانیکی تجویزدی ہے۔مسلم لیگ ن کے رہنماوں نے تصدیق کی کہ پیپلزپارٹی کی طرف سے عام انتخابات مارچ اوراپریل کے درمیان کرانے کی تجویزدی گئی ہے۔ تاہم ان کایہ بھی کہناتھاکہ انہوں نے الیکشن دسمبریااگلے سال جنوری میں کرانے پراصرارکیا۔اس معاملے پراگلے چنددنوں میں پیش رفت کاامکان ہے۔ذرائع کے مطابق پیپلز پارٹی عام انتخابات اور نگران سیٹ اپ پر مشاورت کے لیے جلد پاکستان تحریک انصاف سے بھی مشاورت کریگی۔

یہ بھی پڑھیں  ہما ری تحصیل میں جہاز بھی لینڈ کرتے ہیں۔۔۔!!!!

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker