پاکستانتازہ ترین

پی ٹی آئی،پی اےٹی کےمشتعل مظاہرین اورفوج آمنےسامنےآگئے

 اسلام آباد (مانیٹرنگ سیل) پاک سیکریٹریٹ روڈ اور پی ٹی وی چوک کے بعد پی ٹی آئی اور پی اے ٹی کے مشتعل مظاہرین نے وزیراعظم ہاؤس کی جانب چڑھائی کرنا شروع کردی ہے، تاہم پاک فوج کی جانب سے مشتعل ہجوم کو پیچھے ہٹنے کے اعلانات کیے گئے، ایک موقع پر مشتعل ہجوم اور فوج آمنے سامنے آگئے۔ پارلیمنٹ اور کیبنٹ بلاک میں موجود پاک فوج نے مظاہرین کو آگے بڑھنے سے روک دیا گیا۔ اس سے قبل مظاہرین کی جانب سے ایف سی، رینجرز، پولیس اہلکاروں میں جھڑپیں، پتھراؤ اور شیلنگ جاری رہی، جس سے متعدد پولیس اہل کار زخمی ہوگئے۔ مشتعل مظاہرین پاک سیکریٹریٹ کا دروازہ توڑ کر اندر داخل ہوگئے، انتظامیہ کی جانب سے انہیں روکنے پر مشتعل افراد کی جانب سے پولیس پر شدید پتھراؤ کیا گیا۔ صبح کا آغاز ہوتے ہی شہر اقتدار میں تحریک انصاف اور پاکستان عوامی تحریک کے کارکنوں اور ایف سی اہلکاروں میں شدید تصادم ہوا، تصادم کا آغاز اس وقت ہوا جب مظاہرین نے پاک سیکریٹریٹ میں داخل ہونے کی کوشش کی ،پولیس نے ان کو روکنے کی کوشش کی تو مظاہرین نے پتھراؤ کردیا ۔ شدید پتھراؤ کے بعد ایف سی اہل کاروں نے وہاں سے جان بچانے کیلئے دوڑ لگا دی۔  پتھراؤ کے بعد مظاہرین نے پاک سیکریٹریٹ کے مرکزی دروازے کو آگ لگا دی ، مظاہرین نے پاک سیکریٹریٹ میں کھڑے کنٹینر کو بھی جلا ڈالا،جس سے آگ کے شعلے بلند ہونے لگے۔پی ٹی آئی اور پی اے ٹی کےمشتعل مظاہرین نے قانون نافذ کرنے والوں پر پیٹرول بموں سے حملے کیے، مشتعل ہجوم نے گاڑیوں کے شیشے توڑ دیئے، ڈنڈا بردار بلوائیوں نے سر کاری ملازمین پر بھی پتھراؤ کیا اور میڈیا وین کا شیشے اور ہیڈالائٹس توڑ دیں۔ مظاہرین کے پتھراؤ سے ایس ایس پی عصمت اللہ کا سر پھٹ گیا۔

یہ بھی پڑھیں  سٹی پریس کلب پتوکی کے سالانہ انتخابات برائے سال 2020 مکمل، تنویر اسلم خان صدر منتخب

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker