تازہ ترینعلاقائی

رائے ونڈ: گارڈز اور سربراہان کی میٹنگ، سکیورٹی خدشات پر قابو پانے کی ٹریننگ و ہدایات

رائے ونڈ (نامہ نگار) آج پولیس لائن قلعہ گجر سنگھ لاہور میں رائے دنڈ و لاہور کے منتخب سکول و کالجز کے سربراہان و سیکیورٹی پر معمور مسلح گارڈز کی میٹنگ بلوائی گئی۔ میٹنگ میں کم و بیش تین سو کے لگ بھگ سکول و کالج سربراہان نے شمولیت کی۔ اس میٹنگ کی صدارت محکمہ پولیس کے اعلیٰ افسران نے کی۔شرکاء کو سکیوریٹی خدشات پر قابو پانے کے لیے ہدایات کرتے ہوئے صدر مجلس نے کہا کہ اس امر کو یقینی بنایا جائے کہ اداروں میں باقاعدہ ٹرینڈ گارڈز تعینات ہوں جن کے پاس جدید اسلح ہو۔اس کے علاوہ ادارے کے بلند مقام پر مورچہ نما چبوترہ بنایا جائے جس میں گارڈ موجود ہو جو ہنگامی صورتحال میں حالات کا مقابلہ کر سکے۔ تعلیمی اداروں کی انتظامیہ کو پابند کیا گیا کہ ادارے کی چار دیواری پر خاردار تار لگائی جائے ، سی سی ٹی وی کیمرے نصب کیے جائیں ، ’’گو تھروُ گیٹ‘‘ لگوائے جائیں اور میٹل ڈیٹیکٹر سے ہر آنے والے اجنبی کی شناخت کی جائے۔ مزید یہ بھی بتایا گیا کہ ہر تعلیمی ادارے کو ایک عدد پینِک سوئچ بھی دیا جائے گا جس کو دبانے سے اس ادارے میں ہونے والی ایمرجنسی کی اطلاع متعلقہ پولیس سٹیشن کو ہو جائے گی جس کا عملہ فوری موقع پر پہنچ کر حالات کا مقابلہ کرے گا۔ اس ضمن میں حکومت کی طرف سے جاری کیے جانے والے ہدائت نامے بھی شرکاء میں تقسیم کیے گئے۔ اس دوران پولیس کے اعلیٰ عہدیداران نے شرکت کرنے والے افراد کے سوالات اور مسائل بھی سنے اور ان کو حل کرنے کے لیے فوری احکامات جاری کیے اور اس بات کا مصمم ارادہ کیا گیا کہ لاہور شہر میں پشاور جیسے حالات پیدا نہیں ہونے دیے جائیں گے۔ دوسری جانب معائنہ کے لیے بلوائے گئے مسلح گارڈز کے شناختی کارڈ ، ہتھیاروں کی حالت ، لائسنس اور گارڈز کی جسمانی فٹنس چیک کی گئی۔ اسلحہ کو صحیح طریق سے چلانے کے بارے میں بریفنگ دی گئی اور گارڈز کو نشانہ بازی کرنے کو بھی کہا گیا جس میں انہوں نے اپنی اہلیت ثابت کرنے کی کوشش کی۔

یہ بھی پڑھیں  سرکارﷺکی آمدمرحبا

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker