پاکستانتازہ ترین

دہشتگردجدید ٹیکنالوجی استعمال میں لارہے ہیں،رحمن ملک

اسلام آباد﴿بیورو رپورٹ﴾وفاقی وزیر داخلہ رحمن ملک نے کہا ہے کہ حکومت دہشتگردی اور انتہا پسندی کے خاتمے کے لئے پرعزم ہے۔قومی عزم اور سیاسی یکجہتی سے وطن عزیز کو انتہائ پسندی اور دہشتگردی سے نجات دلائی جا سکتی ہے۔ جرائم پیشہ افراد انارکی اور دہشتگردی پھیلانے کے لئے جدید ٹیکنالوجی استعمال میں لا رہے ہیں اور یہ وقت کی ضرورت ہے کہ پولیس کو جدید ٹیکنالوجی کی تربیت سے بھی روشناس کیا جائے۔آئندہ بجٹ میں ان پولیس افسران کو 25 فیصد اضافی الاؤنس دیا جائے گا جو پولیس ملازمین کو ٹریننگ دیتے ہیں۔پولیس اور عوام کے مابین اچھے تعلقات اور باہمی اشتراک وقت کی ضرورت ہے ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے بدھ کے روز نیشنل پولیس03 خواتین ملازمین سمیت 35 اے ایس آئیز کی پاسنگ آؤٹ پریڈ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہا کہدہشتگردوں کی تشدد اور انتہا پسندی کی قوتوں کو اپنی تہذیب،ثقافت ،نظام زندگی اور روایات پر قابض نہیں ہونے دیں گے۔ان کا کہناتھا کہ دہشتگردی کی لعنت سے خاتمہ کے لئے پولیس اور سیکیورٹی فورسز کا کلیدی کردار ہے جسکو کبھی فراموش نہیں کیا جاسکتا۔تمام امن پسند قوتوں کو ان پاکستان دشمن اور انسان دشمن دہشتگروں کے خلاف مل کر جدوجہد کرنے کی ضرورت ہے۔انہوں نے کہا کہ وفاقی پولیس کو جدید خطوط پر استوار کرنے کی بہت سخت ضرورت ہے اور اس مقصد کے لئے پولیس کی ٹریننگ میںجدید ٹیکنالوجی کی تربیت بھی شامل کی جائے گی۔وفاقی وزیر داخلہ نے اس موقع پر اعلان کیا کہ آئندہ بجٹ میں پولیس کو ٹریننگ دینے والے افسران کو تنخواہوں کے علاوہ پچیس فیصد الاؤنس بھی دیا جائے گا۔عوام کے جان و مال کی حفاظت کرنا پولیس کا فرض ہے اور پولیس اور عوام کے مابین اچھے تعلقات استوار کرنا وقت کی ضرورت ہے۔رفاقی وزیر داخلہ نے ٹریننگ میں اعلی پوزیشنیں حاصل کرنے والوں میں انعامات اور سرٹیفیکیٹ بھی تقسیم کیے۔اس موقع پر آئی جی اسلام آباد سمیت وفاقی پولیس کے اعلی افسران بھی موجود تھے۔

یہ بھی پڑھیں  ہاکی ورلڈ کپ کے افتتاحی میچ میں آسٹریلیا نے ملائیشیا کو ہرادیا

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker