تازہ ترینعلاقائی

ڈیرہ غازی خان،پولیس حراست میں جاں بحق ہونے والے شخص کے ورثاء کا آر پی او آفس کے سامنے نعش رکھ کر احتجاجی مظاہرہ

ڈیرہ غازی خان (مانیٹرنگ سیل) پولیس کی زیر حراست نامعلوم افراد کی فائرنگ سے جاں بحق ہونے والے طارق عرف کالو کے ورثاء کا آر پی او آفس کے سامنے نعش رکھ کر احتجاجی مظاہرہ ۔ تفصیلات کے مطابق دینی مدرسہ کے طالب علم 09سالہ رمضان کے قتل میں ملوث ملزم کی پولیس کی حراست میں ہلاکت کے خلاف ورثاء نے آر پی او آفس کے سامنے پہنچ کر احتجاج کیا اور نعش سڑک پر رکھ کر کچہری روڈ کو ٹریفک کیلئے مکمل طور پر بند کر دیا ۔۔ مشتعل مظاہرین نے مقامی پولیس کے خلاف شدید نعرے بازی کی اور الزام عائد کیا کہ تھانہ صدر پولیس نے قتل کے الزام میں گرفتار ملزم طارق عرف کالو کو جرم ثابت ہونے سے پہلے ہی مبینہ طور پر جعلی مقابلہ میں مار دیا ۔ ورثاء نے وزیر اعلی پنجاب اور آئی جی پنجاب سے واقعہ کی تحقیقات کا مطالبہ کیا ۔ جبکہ دوسری جانب ترجمان ڈی جی خان پولیس کے مطابق گذشتہ رات ملزم طارق عرف کالو کو آلہ قتل کی برآمدگی کیلئے لے جایا جا رہا تھا کہ کوٹ ہیبت کے قریب چار سے پانچ نامعلوم افراد نے پولیس موبائل پر فائرنگ کر دی جس کی زد میں آکر ملزم طارق عرف کالو ہلاک ہو گیا تھا جبکہ ملزمان تاریکی کا فائدہ اٹھا کر فرار ہونے میں کامیاب ہو گئے جس پر 04/05نامعلوم افراد کے خلاف ملزم طارق عرف کالو کو قتل کرنے اور پولیس پارٹی پر فائرنگ کرنے کے جرم میں مقدمہ نمبر 108/15بجرم 302/325، 148/149،353/427مورخہ 09.03.15کو درج کر کے ہلاک ہونے والے ملزم طارق کا پوسٹمارٹم کراکے لاش ورثاء کے حوالے کر دی ہے۔ طارق عرف کالو ایک درندہ صفت انسان تھا جس نے حال ہی میں 09سالہ نو عمر بچہ رمضان کے ساتھ جنسی زیادتی کر کے اس کا گلہ چھری سے کاٹ دیا تھا اور دوران تفتیش درجنوں جنسی زیادتی و بداخلاقی جیسی وارداتوں کو تسلیم کر چکا تھا۔اس سے قبل بھی ملزم کو مقدمہ نمبر 921/09بجرم 376/511میں تھانہ صدر پولیس نے چالان کیا تھا جس میں ملزم طارق عرف کالو نے 09عمر بچی کے ساتھ زیادتی کی تھی ۔ملزم طارق عرف کالو علاقہ کوٹ ہیبت میں نو عمر بچوں کیلئے خوف کی علامت تھا جس کو دیکھ کر بچے بھا گ جاتے تھے اور ملزم نے دوران تفتیش اعتراف کیا کہ وُہ لڑکپن سے اس جنسی زیادتی کا جنونی تھا۔

یہ بھی پڑھیں  اوکاڑہ:آئندہ انتخابات بلاول کی ’’سیاسی بلوغت‘‘کا امتحان ہیں ،ناہید خان

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker